site
stats
پاکستان

سانحہ کوئٹہ، سپریم کورٹ نے انکوائری رپورٹ جاری کردی

اسلام آباد : سپریم کورٹ نے سانحہ کوئٹہ کے حوالے سے جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کی انکوائری رپورٹ جاری کردی ہے، 54 دن میں مکمل کی گئی 119 صفحات پر مشتمل رپورٹ میں نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد کو موثر بنانے پر زور دیتے ہوئے دہشت گردی کا شکار ہونے والے افراد کے لواحقین کو فوری معاوضہ دینے کی بھی سفارش کی گئی ہے۔

رپورٹ میں وزارتِ داخلہ کی کارکردگی کو سخت تنقید کا نشانہ بنایا گیا ہے اور وزارتِ داخلہ کی ناقص کارکردگی کی وجہ خوشامدی افسر شاہی کو قرار دیا گیا جب کہ نیشنل ایکشن پر عمل درآمد اور مقاصد کے حصول میں سست روی پر تشویش کا اظہار کیا گیا ہے۔

ذرائع کے مطابق انکوائری رپورٹ میں 18 سفارشات دی گئی ہیں جس میں کالعدم تنظیموں کے خلاف فوری کارروائی، انسداد دہشت گردی ایکٹ کے فوری نفاذ ، دہشت گردی کا شکار افراد کےلواحقین کو فوری معاوضہ دینے،دہشت گردوں اور ان کی تنظیموں کے بیانات و مؤقف نشرکرنے والوں کے خلاف کارروائی کے علاوہ کالعدم تنظیموں کے جلسے جلوس منعقد کرنے پر انسداد دہشت گردی ایکٹ کے تحت کارروائی شامل ہیں۔

قبل ازیں سپریم کورٹ نے ایڈوکیٹ جنرل بلوچستان کی جانب سے سانحہ کوئٹہ کی رپورٹ خفیہ رکھنےکی استدعا مسترد کرتے ہوئے چیف جسٹس نے کہا کسی چیز کو خفیہ نہیں رکھ سکتے، چیف جسٹس نےرپورٹ کی کاپی فریقین کو فراہم کرنے کی ہدایت بھی کی جس کے بعد سماعت جنوری کےتیسرے ہفتےتک ملتوی کردی گئی۔

 

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top