The news is by your side.

Advertisement

سپریم کورٹ کا پرویزمشرف کےخلاف آئین شکنی کیس میں تاخیر کا نوٹس ، رپورٹ 15 میں پیش کرنے کا حکم

ملزم دانستہ طورپرپیش نہیں ہورہاتو کیا عدالت بےبس ہوجائے؟ چیف جسٹس

اسلام آباد : سپریم کورٹ نےسابق صدر پرویزمشرف کےخلاف آئین شکنی کیس میں تاخیر کا نوٹس لیتے ہوئے خصوصی عدالت سے  رپورٹ پندرہ دن میں  طلب کرلی، چیف جسٹس نے کہاملزم دانستہ طور پر پیش نہیں ہورہاتو کیا عدالت بے بس ہوجائے؟۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں پرویزمشرف کےخلاف آرٹیکل چھ کیس کی سماعت میں تاخیر سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی ، سپریم کورٹ نے رجسٹرار خصوصی عدالت سے پندرہ روز میں رپورٹ طلب مانگ لی۔

چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ نے حکم دیا کہ بتایا جائے کیس میں تاخیرکی کیاوجہ ہے؟ ملزم دانستہ طور پر پیش نہیں ہو رہا تو کیا عدالت بے بس ہوجائے؟ ملزم کا عدالت میں بیان اس کو دی جانے والی رعایت ہے۔

اعلی عدالت نے کہا تین سو بیالیس کے بیان میں ملزم سے پوچھا جاتاہے کیاشہادتوں سے متفق ہے یا انکاری؟ ملزم پیش نہیں ہورہا تو عدالت جواب میں انکار لکھے اور کارروائی آگے بڑھائے، کسی ملزم کی دانستہ غیرحاضری کی وجہ سے عدالت بے بس نہیں ہوسکتی۔

دوران سماعت لاہور بار کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ ٹرائل ملزم کے بیرون ملک جاکر بیٹھ جانے سے رکاہوا ہے، جس پر سپریم کورٹ نے وفاق، پرویزمشرف اور رجسٹرارخصوصی عدالت کونوٹس جاری کرتے ہوئے مزید سماعت پچیس مارچ تک ملتوی کردی۔

یاد رہے گذشتہ سال اکتوبر میں سابق صدر پرویز مشرف کے خلاف آئین شکنی کیس کی سماعت میں عدالت نے سابق صدر کا بیان ریکارڈ کرنے کے لیے کمیشن بنانے کا حکم دیا تھا۔

اس سے قبل مذکورہ کیس میں سیکریٹری داخلہ نے بتایا تھا کہ ہم نے مشرف کو لانے کے لیے انٹر پول کو خط لکھا تھا لیکن انٹر پول نے معذرت کرلی کہ سیاسی مقدمات ان کے دائرہ اختیار میں نہیں۔

مزید پڑھیں : سابق صدر پرویز مشرف جان لیوا مرض میں مبتلا ہو گئے، میڈیکل رپورٹ

خیال رہے پرویز مشرف کی تازہ میڈیکل رپورٹ میں انکشاف ہوا تھا کہ پرویز مشرف کو ایک جان لیوا بیماری کا سامنا ہے۔ رپورٹ میں کہا گیا کہ پرویز مشرف کو ’امیلوئی ڈوسس‘ نامی خطرناک بیماری لاحق ہے، ان کا علاج برطانیہ کے 2 معروف اسپتالوں کے ساتھ مل کر کیا جا رہا ہے۔

رپورٹ میں کہا گیا تھا کہ روزانہ کی بنیاد پر علاج نہ ہونے سے مشرف کو جان کا خطرہ ہے، پرویز مشرف دل اور بلڈ پریشر کے عارضے میں بھی مبتلا ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں