The news is by your side.

Advertisement

کم سن ماجد کے بعد اس کا 4 سالہ بھائی یاسین بھی دم توڑ گیا

کراچی: انڈہ پراٹھے کا ناشتا کر کے گھر والوں ہی پر فائرنگ کرنے والے بد بخت ملزمان کی گولیوں کا نشانہ بننے والا چار سالہ یاسین بھی دم توڑ گیا۔

تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز کراچی کے علاقے سہراب گوٹھ میں جمالی گوٹھ میں فائرنگ سے زخمی ہونے والا 4 سالہ یاسین بھی دم توڑ گیا، واقعے کے خلاف سہراب گوٹھ تھانے میں قتل اور اقدام قتل کی دفعات کے تحت مقدمہ بچوں کے دادا آچر خان کی مدعیت میں درج کر لیا گیا۔

گزشتہ روز ملزمان کی فائرنگ سے 5 سالہ ماجد، 4 سالہ یاسین اور 25 سالہ شازیہ زخمی ہوئے تھے، پولیس کا کہنا ہے کہ دونوں بھائی ماجد اور یاسین نے دوران علاج دم توڑا، ماجد گزشتہ روز جب کہ یاسین رات گئے جاں بحق ہوا۔ زخمی خاتون کی نند نے اے آر وائی نیوز کو بتایا کہ سفاک ملزمان نواب اور دلدار نے بچوں کے سر اور منہ پر گولیاں ماریں، جب کہ بھابھی شازیہ کے پیٹ اور ٹانگوں پر گولیاں ماری گئیں۔

عباسی شہید اسپتال میں خاتون اور اس کے بیٹے کو طبی امداد دی جا رہی ہے

واقعے کے بعد آئی جی سندھ کلیم امام نے نوٹس لیتے ہوئے ایس ایس پی ایسٹ سے پیش رفت پر مشتمل تفصیلات طلب کر لی تھیں۔

فائرنگ میں معجزانہ بچ جانے والی خاتون نے اے آر وائی نیوز سے گفتگو میں کہا کہ فائرنگ کرنے والے ملزمان شہداد کوٹ سے آئے تھے، ملزمان صبح گھر پہنچے اور بھابھی سے انڈے پراٹھے کا ناشتا بنوایا، ناشتا کرنے کے بعد ملزمان نے میری بھابھی شازیہ کو گولیاں ماریں، پھر باہر گلی میں کھیلتے ماجد اور یاسین کو ڈھونڈا اور گولیاں ماریں، فائرنگ کرنے والے نواب اور دلدار تھے جو فرار ہو گئے۔

بچ جانے والی خاتون اے آر وائی نیوز کو تفصیلات بتا رہی ہیں

معلوم ہوا کہ غریب آباد گوٹھ میں فائرنگ کا واقعہ ذاتی دشمنی کا شاخسانہ ہے، فائرنگ سے جاں بحق اور زخمی بچوں کے دادا آچر نے بتایا میرے بیٹے تاج محمد نے چند ماہ قبل اپنے چچا کو قتل کیا تھا، میری 2 بیٹیاں اپنے چچا کے گھر شادی ہو کر گئی ہیں۔ اپنے باپ کا بدلہ لینے کے لیے میرے بڑے بھائی کے بیٹوں نے آ کر فائرنگ کی جس سے میرے پوتے جاں بحق ہوئے، جب کہ میرا ایک بیٹا اور بچوں کی ماں شدید زخمی ہوئی۔

دادا آچر نے مزید بتایا کہ ان کا بیٹا تاج محمد اپنے چچا کو قتل کرنے کے بعد 10 ماہ سے گھر سے غائب ہے، لیکن اس کے بدلے معصوم بچوں نے کسی کا کیا بگاڑا تھا۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں