خوش گوار ازدواجی زندگی کا گُر: جاپانی جوڑے نے راز بتا دیا -
The news is by your side.

Advertisement

خوش گوار ازدواجی زندگی کا گُر: جاپانی جوڑے نے راز بتا دیا

ٹوکیو: ایک صدی سے زائد جینے والے دنیا کے معمر ترین جاپانی جوڑے نے کام یاب ازدواجی زندگی کے گُر بتا دیے، 80 سال سے ساتھ رہنے والے جوڑے کا راز ہے بیوی کا صابر و شاکر ہونا۔

تفصیلات کے مطابق جاپان کے معمر ترین جوڑے کو دنیا کے سب سے پرانے شادی شدہ جوڑے کا بھی اعزاز حاصل ہوا ہے، جو اسّی سال سے خوش و خرم زندگی گزار رہا ہے، جس کی مشترکہ عمر 208 سال بنتی ہے۔

عام طور پر یہ خیال کیا جاتا ہے کہ خوش گوار زندگی میں بیوی کا کردار مرکزی ہوتا ہے، معمر ترین جاپانی جوڑے نے اس خیال کو سچ ثابت کر دیا ہے، جوڑے کی خوش گوار زندگی کا راز یہ نکلا کہ بیوی نے اسّی سال تک صبر سے کام لیا۔

گنیز ورلڈ ریکارڈز کے مطابق ماساؤ ماتسوموتو کی عمر 108 جب کہ ان کی بیوی میاکو کی عمر 100 سال ہے، وہ اکتوبر 1937 میں شادی کے بندھن میں بندھے تھے۔

میاکو نے ہنستے ہوئے بتایا کہ میں بہت خوش ہوں، اور ہمارے ازدواجی زندگی کی کام یابی کا راز میرا صبر ہے۔ خیال رہے کہ دنیا کا یہ معمر ترین اور خوش ترین جوڑا ایک نرسنگ ہوم میں رہتا ہے تاہم ان کے بچے ان سے ملنے جاتے رہتے ہیں۔

ماتسوموتو کی شادی دوسری جنگ عظیم میں جاپان کی شمولیت سے تین سال قبل ہوئی تھی، اور انھیں شادی کے بعد جنگ میں شرکت کے لیے ملک سے باہر بھیجا گیا۔


یہ بھی پڑھیں:  جاپان کے شہر ہیرو شیما پر ایٹمی حملے کو 73 برس بیت گئے


لیکن اس خوش و خرم جوڑے کی زندگی خانگی جنگ و جدل سے پاک رہی، جس کے باعث یہ اسّی سال سے خوش گوار زندگی گزار رہا ہے، اور ابھی گزشتہ ماہ ان کا پچیسواں پڑ پوتا پیدا ہوا ہے۔

سو سالہ میاکو نے بتایا کہ چھوٹی چھوٹی باتوں پر مت لڑیں، ایک دوسرے کی غلطیوں کو نظر اندازکریں، برداشت کی عادت ڈالیں، تو آپ کی زندگی بھی میری طرح بن جائے گی۔

خیال رہے کہ جاپان دنیا کا وہ ملک ہے جہاں لوگ طویل زندگی جیتے ہیں، جاپان کی وزارتِ صحت کے مطابق ہانگ کانگ کے بعد یہ دوسرا ملک ہے جہاں اوسط عمر 84 سال ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں