The news is by your side.

Advertisement

دبئی:پاکستانی گارڈ کو اماراتی لڑکی کو ہراساں کرنے کےجرم میں سزا

دبئی: 9 سالہ لڑکی کو جنسی طور پر ہراساں کرنے والے پاکستانی شخص کوعدالت نے تین ماہ جیل میں قید کے بعد ملک بدر کرنے کی سزا سنادی۔

تفصیلات کے مطابق اتوار کے روز متحدہ عرب امارات کے شہر دبئی کی عدالت نے رہائشی عمارت میں 9 سالہ لڑکی کو جنسی طور پر ہراساں کرنے والے مجرم کو تین ماہ قید کے بعد ملک بدر کرنے کی سزا سنادی۔

متاثرہ لڑکی نے 31 سالہ پاکستانی سیکیورٹی گارڈ پر الزام عائد کیا تھا کہ اس نے سپر مارکیٹ میں جنسی طور ہر ہراساں کرنے کی کوشش کی تھی۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا تھا کہ مجرم نے عدالت کے سامنے دعویٰ کیا کہ ’اس نے لڑکی کے ساتھ ایسی حرکت ارادتاً نہیں کی تھی‘۔

دبئی کی عدالت نے پاکستانی شخص کو مجرم قرار دیتے ہوئے تین ماہ قید کی سزا مکمل ہونے کے بعد ملک بدر کرنے کے احکامات جاری کردیئے۔

متاثرہ لڑکی کی والدہ کا کہنا تھا کہ ’میری بیٹی نے مجھے فون کیا کہ عمارت کا سیکیورٹی گارڈ مجھے ہراساں کررہا ہے‘۔

خاتون کا کہنا تھا میری بیٹی نے بتایا کہ وہ اپنی دوست کے ہمراہ مارکیٹ جاری تھی کہ اچانک گارڈ قریب آیا اور جنسی طور پر ہراساں کرنے لگا۔

دبئی پولیس کا کہنا تھا کہ متاثرہ لڑکی کے والدین کی جانب سے شکایت درج ہونے کے بعد سیکیورٹی اہلکاروں نے جائے وقوعہ پر پہنچ کر مارکیٹ میں لگے ہوئے سیکیورٹی کیمروں کی جانچ پڑتال کی گئی، ویڈیوں میں واضح طور پر دیکھا جاسکتا ہے پاکستانی شخص لڑکی کو چھونے کی کوشش کررہا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں