سانحہ سیہون : دہشت گردوں کو پناہ دینے والا سہولت کار گرفتار، اسلحہ برآمد -
The news is by your side.

Advertisement

سانحہ سیہون : دہشت گردوں کو پناہ دینے والا سہولت کار گرفتار، اسلحہ برآمد

صابرعرف دودھ والا نے دہشت گردوں کو پناہ دی تھی،تعلق کالعدم سپاہ صحابہ سے ہےایس ایس پی ویسٹ

کراچی : سانحہ سیہون کا سہولت کار بلدیہ سے گرفتار کرلیا گیا، ملزم صابرعرف دودھ والا نے دہشت گردوں کو پناہ دی تھی، ملزم کاتعلق کالعدم سپاہ صحابہ سے ہے۔

تفصیلات کے مطابق سانحہ سیہون کیس کی تحقیقات میں بڑی پیشرفت سامنے آئی ہے، لعل شہباز قلندرؒ کے مزار کو خون سے لال کرنے والے دہشت گرد کو سہولت فراہم کرنے والا ملزم حراست میں لے لیا۔

اس حوالے سے ایس ایس پی ویسٹ ڈاکٹررضوان نے صحافیوں کو بتایا ہے کہ سانحہ سیہون کا سہولت کار کو کراچی کے علاقے بلدیہ سے گرفتار کرلیا گیا ہے، ملزم صابرعرف دودھ والا نے تین دہشت گردوں کو پناہ دی تھی، ملزم کاتعلق کالعدم سپاہ صحابہ سے ہے۔

ایس ایس پی ویسٹ کا مزید کہنا تھا کہ ملزم صابر کو فون کال ٹریس ہونے پر گرفتار کیا گیا، گرفتار دہشت گرد نے چار افراد کو قتل کرنے کا بھی اعتراف کرلیا ہے، اس کے علاوہ ملزم کے قبضے سے دستی بم اور دیگراسلحہ برآمد ہوا ہے۔

اس موقع پر ملزم صابرعرف دودھ والا نے بتایا کہ مجھے دہشت گردی کی کارروائی کا علم نہیں تھا، کالعدم تنظیم کے کمانڈر نے سانحے سے دو دن پہلے تین افراد کو ٹھہرایا تھا۔

مزید پڑھیں: درگاہ لعل شہباز قلندر پر خودکش حملہ،76افراد شہید، 250 زخمی

سیہون سانحے سے ایک دن پہلے تینوں دہشت گرد صبح ہوتے ہی نکل گئے تھے، سانحے کی سی سی ٹی وی فوٹیج دیکھی تو پتہ چلا کہ تینوں دہشت گرد تھے۔

مزید پڑھیں: سیہون دھماکہ، خودکش بمبار کے سہولت کاروں کی نشاندہی

واضح رہے کہ گزشتہ سال فروری میں سیہون میں درگاہ حضرت لعل شہباز قلندرؒ کی درگاہ کے احاطے میں دھمال کے دوران خودکش حملے کے باعث 76 افراد شہید اور250 سے زائد زخمی ہوگئے تھے، جاں بحق افراد میں 20 بچے، نو خواتین، 45 مرد اور ایک پولیس اہلکار شامل تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں