سی پیک کا نام تبدیل نہیں ہوگا، چین نے پاکستان کو آگاہ کردیا -
The news is by your side.

Advertisement

سی پیک کا نام تبدیل نہیں ہوگا، چین نے پاکستان کو آگاہ کردیا

اسلام آباد : حکومت نے سینیٹ کو بتایا ہے کہ چین نے پاکستان کو باضابطہ طور پر آگاہ کردیا ہے کہ سی پیک کا نام تبدیل نہیں کیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق سینیٹ کا اجلاس چئیر مین میاں رضا ربانی کی زیر صدارت ہوا۔ اجلاس میں سیفران کے وزیر عبدالقادر بلوچ نے ایوان کو بتایا کہ پا کستان میں چین کے سفیر نے بھارت میں چین کے سفیر کی طرف سے سی پیک کا نام تبدیل کرنے کے بیان کی تردید کردی ہے اور پا کستان کو با ضابطہ طور پر آگاہ بھی کر دیا گیا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ ایران کی جانب سے ان کی مسلح افواج کے سربراہ نے سرحد پر جھڑپوں میں 12 سرحدی گارڈز کے قتل کے بعد پاکستان میں کاروائی کا بیان دیا لیکن یہ طریقہ درست نہیں ہے۔ دو دوست ہمسایہ ممالک کے رابطے کا طریقہ ایسا نہیں ہوتا۔

ایران کے ناظم الامور کو دفتر خارجہ طلب کر کے ان سے احتجاج کیا گیا، وفاقی وزیر نے کہا کہ پاک افغان چمن بارڈر پر سرحد کی ہماری جانب مردم شماری جاری تھی۔ مردم شماری کی ٹیم کے ہمراہ ایک فوجی اور ایک نیم فوجی جوان تھا۔

انہوں نے الزام لگایا کہ انہوں نے سرحد پار کرنے پر فائر کھول دیا۔ عبدالقادر بلوچ کا کہنا تھا کہ معاملے کی تحقیقات پر مشترکہ سروے کرایا گیا جس کی رپورٹ مکمل ہو چکی ہے۔ تناؤ کو کم کرنے کے لیے ہر سطح پر بات چیت جاری ہے۔ اگر افغان فوجی چاہتے تو وہ ہمارے فوجیوں پر فائر کھولنے کی بجائے ان کو گرفتار بھی کر سکتے تھے۔

ان کا کہنا تھا کہ پارلیمانی وفد کے دورہ افغانستان میں حامد کرزئی اور عبد اللہ عبداللہ نے مثبت بیان دیئے۔ انہوں نے کہا کہ حامد کرزئی نے پاکستان دورہ کی دعوت بھی قبول کی چمن کے واقعہ سے چند روز قبل چیف آف جوائنٹ اسٹاف کمیٹی نے افغانستان کا دورہ بھی کیا۔

سیاسی معاملات میں گورنر سندھ کی مداخلت اور سی سی آئی اجلاس سے متعلق اپوزیشن کی تحریک پر وزیر قانون زاہد حامد نے جواب دیا اورکہا کہ یہ دونوں نان ایشوزہیں ۔سی سی آئی کی میٹنگ کے منٹس بنا کر سب جماعتوں کو بھیجے گئے اور وزرائے اعلی نے منٹس کنفرم کئے جبکہ وفاقی وزیر پٹرولیم نے منٹس کنفرم نہیں کئے ۔ آئندہ میٹنگ میں مسئلہ حل ہوجائے گا۔

انہوں نے کہا کہ گورنر سندھ کا کہنا ہے کہ وہ آئین کے مطابق ذمہ داریاں نبھا رہے ہیں انہوں نے پارٹی میٹنگ یا جلسے میں شرکت کی اور نہ ہی گورنر ہاؤس میں کوئی میٹنگ کی۔

زاہد حامد نے کہا کہ گورنر سندھ نے کوئی سیاسی بیان دیا اور نہ ہی کسی ٹاک شو میں شرکت کی، گورنر سندھ کو مختلف جماعتوں کے لوگ ملنے آئے تھے جن سے ملاقات کی تھی۔ بعد ازاں سینیٹ کا اجلاس غیر معینہ مدت کے لۓ ملتوی کر دیا گیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں