The news is by your side.

Advertisement

مقبوضہ کشمیر میں انسانی المیہ جنم لے رہا ہے، سرتاج عزیز کا اقوام متحدہ کو خط

اسلام آباد : مشیرخارجہ سرتاج عزیز نے اقوام متحدہ کےجنرل سیکرٹری کو لکھے گئے خط میں کہا ہے کہ سلامتی کونسل کی قراردادوں پرعمل نہ ہونےسےانسانی المیہ جنم لے رہا ہے۔

تفصیلات کے مطابق مشیرخارجہ سرتاج عزیز نے اقوام متحدہ کے جنرل سیکرٹری کو مقبوضہ کشمیر میں جاری بھارتی جارحیت میں حالیہ دنوں میں آنے والی تیزی سے آگاہ کرنے کے لیے خط تحریر کیا ہے جس میں مسئلہ کشمیر کو سلامتی کونسل کی قراردادوں کے مطابق حل کرنے کا مطالبہ دہرایا۔

مشیر خارجہ نے اپنے خط میں جنرل سیکرٹری کو کشمیرمیں آبادیاتی تبدیلی کی کوششوں سےآگاہ کرتے ہوئے تحریر کیا کہ بھارت مقبوضہ وادی میں کشمیریوں کواقلیت میں بدل رہا ہے جس کے لیے مقبوضہ کشمیرمیں غیرمستقل رہائشیوں کو رہائشی سرٹیفکیٹ دیا جا رہا ہے۔

خط کے متن میں درج ہے کہ ایک سازش کے تحت مقبوضہ کشمیرکی زمین ریٹائرڈ بھارتی فوجیوں کو الاٹ کی جا رہی ہے اور کشمیریوں پنڈتوں کو مقبوضہ کشمیر میں بسایاجارہاہے تاکہ مقبوضہ کشمیرمیں مسلم اکثریت کواقلیت میں تبدیل کردیا جائے۔

انہوں نے کہا کہ ایسےاقدامات سےکسی بھی استصواب رائے کے نتائج کوتبدیل کیاجاسکتا ہے اور یہی بھارت کے مذموم مقاصد ہیں جس کے لیے وہ باقاعدہ منصوبہ بندی کے تحت عمل پیرا بھی ہے۔

مشیر خارجہ سرتاج عزیز نے پاکستان کا موقف دہراتے ہوئے کہا کہ سلامتی کونسل کی قراردادوں پرعمل سے لاکھوں کشمیریوں کےمصائب ختم کیے جا سکتے ہیں اور مقبوضہ کشمیر اب کسی مزید تاخیر کا متحمل نہیں ہوسکتا کہ یہ ایک خالص انسانی مسئلہ ہے جس میں ہزاروں لوگ اپنی جانوں سے گئے اور سینکڑوں معذوری کی زندگی بسر کر رہے ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں