The news is by your side.

Advertisement

شاہ محمود کا آذربائیجان کے ہم منصب کو فون، آرمینیا کے اقدام کی مذمت

اسلام آباد: وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے اپنے آذربائیجانی ہم منصب کو فون کر کے کہا ہے کہ پاکستان کو نگورنو کاراباخ میں امن و امان کی مخدوش صورت حال پرگہری تشویش ہے۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق وزیر خارجہ شاہ محمود نے آذربائیجان کے وزیر خارجہ جے ہون بائرموف کے ساتھ ٹیلی فونک رابطہ کر کے دو طرفہ تعلقات، آذربائیجان اور آرمینیا کے درمیان پائی جانے والی کشیدگی سمیت باہمی دل چسپی کے مختلف امور پر تبادلہ خیال کیا۔

وزیر خارجہ نے کہا پاکستان کو نگورنو کاراباخ میں امن و امان کی مخدوش صورت حال پرگہری تشویش ہے، آرمینیا کی طرف سے آذربائیجان کی دیہی آبادی پر بھاری گولہ باری قابلِ مذمت ہے اور پاکستان اس مشکل وقت میں آذربائیجان کی قیادت اور عوام کے ساتھ ہے۔

شاہ محمود نے کہا ‏ہم نگورنو کاراباخ کے حوالے سے آذربائیجان کے مؤقف کی حمایت کرتے ہیں، دونوں ممالک کے مابین انسانی بنیادوں پر جنگ بندی امن و استحکام کے لیے ایک مثبت پیش رفت ہے۔

وزیر خارجہ نے پاکستان کے مؤقف کو دہراتے ہوئے کہا فریقین کے درمیان پائیدار امن کا انحصار اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں پر مکمل عمل درآمد اور آذربائیجان کے علاقوں سے آرمینیائی افواج کے انخلا پر ہے۔

دوسری طرف آذربائیجان کے وزیر خارجہ نے حالیہ تنازعے میں پاکستان کی طرف سے بھرپور حمایت پر شاہ محمود کا شکریہ ادا کیا، وزیر خارجہ پاکستان نے بھی او آئی سی رابطہ گروپ سمیت مختلف عالمی فورمز پر آذربائیجان کی طرف سے نہتے کشمیریوں کی بھرپور حمایت کو قابلِ تحسین قرار دیا۔

دونوں وزرائے خارجہ نے پاکستان اور آذربائیجان کے مابین دو طرفہ تعلقات کی نوعیت پر اظہار اطمینان کیا، اور تجارت، تعلیم، اور کلچر سمیت کثیرالجہتی شعبہ جات میں دو طرفہ تعاون کے فروغ پر اتفاق کیا۔

دریں اثنا، وزیر خارجہ شاہ محمود نے آذری وزیر خارجہ کو دورہ پاکستان کی دعوت بھی دی جسے انھوں نے شکریے کے ساتھ قبول کر لیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں