وزیر خارجہ نے اسرائیلی طیارے کی پاکستان آمد کی خبر کو بے بنیاد قرار دے دیا -
The news is by your side.

Advertisement

وزیر خارجہ نے اسرائیلی طیارے کی پاکستان آمد کی خبر کو بے بنیاد قرار دے دیا

اسلام آباد : وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ اسرائیلی طیارے سے متعلق خبر بے بنیاد ہے جس کی تردید بھی آچکی ہے، سعودی عرب کے پیکج پر اعتراض نہیں کرنا چاہئے، اس سے معیشت کو استحکام ملے گا۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے اسلام آباد میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ وزیر خارجہ نے اسرائیلی طیارے کی پاکستان آمد کے حوالے سے خبر کو بے بنیاد قرار دیتے ہوئے مزید کہا کہ سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی جس چیز کی کوئی حقیقت نہیں اس پر جواب دینا مناسب نہیں۔

نئے سفیروں کی تعیناتی سے متعلق ان کا کہنا تھا وزیراعظم کی خواہش تھی تجربہ کار سفارتکار تعینات کئے جائیں، پہلے جتنے بھی سفارتکار تعینات تھے وہ سفارت کار نہیں تھے بلکہ سیاسی لوگ تھے، امید ہے کہ تجربہ کار سفارت کار دنیا کے سامنے پاکستان کا مضبوط مؤقف پیش کریں گے۔

سعودی پیکج سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ سعودی عرب نے کوئی شرط عائد نہیں کی بلکہ پیکج کے ذریعے پاکستان کو ریلیف دینے کی کوشش کی ہے، سعودی عرب کے پیکج پر اعتراض نہیں کرنا چاہئے، اس سے معیشت کو استحکام ملے گا اور ملک میں خوشحالی آئے گی، نکتہ چینی کے بجائےمثبت رویہ اختیار کرنا چاہئے۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ چین ہمارا دوست ہے، ہرمشکل وقت میں ہمارے ساتھ کھڑا رہا، وزیراعظم عمران خان کادورہ چین بہت اہم ہوگا، دورہ چین میں سی پیک سے متعلق تبادلہ خیال ہوگا، معیشت بہترہوگی تو روزگار کے مواقع پیدا ہوں گے۔

ایک سوال کے جواب میں ان کا کہنا تھا کہ افغانستان میں استحکام کیلئے پاکستان پوری طرح مدد کررہا ہے، ہماری کی خواہش ہے افغانستان میں امن قائم ہو، محض بیان بازی سےمسائل حل نہیں ہوتے، قندھار دھماکوں کے بعد افغان حکام سے رابطہ کیا، پاکستان پر الزام لگانا بہت آسان ہے، مسئلے کا مل کرحل نکالنا مشکل ہے۔

انہوں نے کہا کہ مسئلہ کشمیر پر پورے پاکستان میں آواز بلند ہورہی ہے، اس کا مسئلہ اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق حل ہوناچاہئے، مسئلہ کشمیر کو اقوام متحدہ میں بھرپور طریقے سے اٹھایا،اس کے حل ہونے سے دونوں ممالک کے درمیان بہت سے مسائل حل ہوسکتے ہیں، اختلافات کے باوجود مسئلہ کشمیر پر تمام سیاسی جماعتیں متحد ہیں، یہ مسئلہ7دہائیوں سے چل رہا ہے اسے حل ہونا چاہئے۔

شاہ محمود قریشی نے مزید کہا کہ اپوزیشن کا اتحاد جمہوریت کی بحالی کا نہیں اپنی بحالی کا ہے، ایک دوسرے کے دست وگریباں ہونے والی جماعتیں ایک کیسے ہوگئیں، یہ دونوں ذاتی مفادات کیلئے ایک ہوئی ہیں، عوام انہیں جانتی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں