نہ کوئی ڈیل تھی اورنہ کوئی ڈیل کریں گے، وزیرخارجہ شاہ محمودقریشی
The news is by your side.

Advertisement

نہ کوئی ڈیل تھی اورنہ کوئی ڈیل کریں گے، وزیرخارجہ شاہ محمودقریشی

جمہوریت اور18ویں ترمیم کوکوئی خطرہ نہیں ہے، وزیر خارجہ

ملتان : وزیرخارجہ شاہ محمودقریشی نے حکومت اوراپوزیشن کےدرمیان ڈیل سے متعلق واضح کردیا ہے کہ نہ کوئی ڈیل تھی اورنہ کوئی ڈیل کریں گے ، اس وقت ن لیگ اور پیپلزپارٹی میں ڈیل ہورہی ہے، کل تک جودست وگریباں تھے آج شیروشکرہورہے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق وزیرخارجہ شاہ محمودقریشی نے ملتان میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا پاکستان کےعوام نےپی ٹی آئی کومینڈیٹ دیاہے، کوئی ڈیل نہیں ہے اورنہ کوئی ڈیل کریں گے، اس وقت ن لیگ اور پیپلزپارٹی میں ڈیل ہورہی ہے، کل تک جودست وگریباں تھے آج شیرو شکر ہو رہے ہیں۔

کل تک جودست وگریباں تھے آج شیروشکرہورہےہیں

شاہ محمودقریشی کا کہنا تھا کہ لندن میں مقبوضہ کشمیرسےمتعلق انٹرنیشنل کانفرنس ہورہی ہے، بھارت کا میرواعظ عمرفاروق سے رابطےپراعتراض کی حیثیت نہیں، کل مقبوضہ کشمیرکانفرنس میں شرکت کیلئےروانہ ہورہاہوں، ہماری خواہش ہےزیادہ سےزیادہ پاکستانی حج کی سعادت حاصل کریں۔

جمہوریت اور18ویں ترمیم کوکوئی خطرہ نہیں ہے

18اٹھارہویں ترمیم کے حوالے سے وزیر خارجہ نے کہا فیصلہ کن قوت پاکستان کے عوام ہیں اور عوام فیصلہ کرچکےہیں، 18 ویں ترمیم پر ایشو نہیں، سیاسی بقا کیلئے غیرضروری واویلا کیا جارہا ہے، جمہوریت اور18ویں ترمیم کوکوئی خطرہ نہیں ہے، آئین کوکوئی خطرہ نہیں چندشخصیت کوخطرہ ہوسکتاہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ن لیگ اورپیپلزپارٹی نےایک دوسرے پر مقدمات بنائے تھے، ہم نے کسی پارٹی کیخلاف مقدمات نہیں بنائے، پاکستان کی عوام نے فیصلہ دیا ، ن لیگ پی پی کوتسلیم نہیں کی۔

شاہ محمودقریشی نے مزید کہا جنوبی پنجاب کے لوگوں نے ہمیں ووٹ دیاہے، جنوبی پنجاب صوبہ ہمارا مؤقف تھا جس پر اب بھی قائم ہیں، سندھ حکومت کو اپنی ناقص حکمرانی اور لوٹ مار سے خطرہ ہے، سندھ میں ہم کوئی جوڑ توڑ نہیں کررہے۔

سب ملکوں کاماننا ہے داعش کو بڑھنا نہیں چاہیے

وزیرخارجہ کا کہنا تھا کہ افغانستان اور شام میں داعش موجود ہے ، خطے کا امن تباہ کرسکتی ہے، سب ملکوں کاماننا ہے داعش کو بڑھنا نہیں چاہیے۔

بھارت سے مذاکرات کے حوالے سے انھوں نے کہا بھارت میں جو بھی حکومت آئےگی پاکستان بات چیت کے لئے تیار ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں