The news is by your side.

Advertisement

کپیٹن صفدر کی گرفتاری ، شہباز گل نے تمام حقائق سے پردہ اٹھادیا

لاہور : معاون خصوصی ڈاکٹر شہباز گل کپیٹن صفدر کی گرفتاری کے واقعے کے حقائق سے پردہ اٹھاتے ہوئے کہا سی سی ٹی وی فوٹیج سے واضح ہے، دروازے پر باہر سے کسی قسم کا نشان نہیں، دروازے کا لیچ اندر سے ٹوٹا ہے، مطلب اسے اندر سے توڑا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق معاون خصوصی ڈاکٹر شہباز گل نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا آج کے پریس کانفرنس میں چند حقائق رکھنے ہیں، پچھلے چالیس سال دو ٹبرایسے آئے جن کی پی ایچ ڈی جھوٹ میں ہے ، کرپشن پکڑوانے میں بڑا ہاتھ مریم نواز کاہے ، تین چار کردار ایسے ہیں جنہوں نے خاندان کی کرپشن کو پبلک کیا، اب یہ چاہتی ہے انکے ہر ڈرامے اوربات کوتسلیم کیا جائے۔

معاون خصوصی کا کہنا تھا کہ سلام میں ایسی گواہ کی گواہی کونہیں ماناجاتا جو جھوٹا ہو، عدالتوں سے انکا ماضی ڈکلیئرڈ ہے ،اعلی ترین عدالت نے لکھا مریم صفدر کےجعلی دستاویزات جمع کیے، کہاکہ والدکی تیمارداری کرنی ہیں اسی لیے جیل سے باہرہیں، والد کی بیماری پر انکو ضمانت ملی ،یہ سرٹیفائیڈ جھوٹی ہے۔

ڈاکٹر شہباز گل نے کہا کہ بڑی بات ہوئی دروازہ توڑا گیا، پولیس آئی ، اپنی ہی گارڈ ان سے ہدایات لے رہے تھے، اپنے گارڈز کو اداروں کا بنا کر پیش کیا گیا ، کراچی واقعےکی یہ لوگ اپنی ویڈیو کیوں نہیں دےرہے؟ ہر سی سی ٹی وی فوٹیج میں ایک شخص ویڈیوبنانظرآتاہے، ایک ایک پولیس والے کی ویڈیوبنائی گئی۔

انھوں نے بتایا کہ ویڈیو بنانے والا پروفیشنل تھا،ٹرائی پوڈکی مددسےویڈیوبنائی گئی، پہلےاس ویڈیو کولندن اورپھرپاکستان میں چلوایاگیا، ویڈیوبنانےوالاہرجگہ موجودتھا لیکن سی سی ٹی وی فوٹیج سےواضح ہے دروازے پر باہر سے کسی قسم کا نشان نہیں ، دروازے کا لیچ اندر سے ٹوٹا ہے، مطلب اسے اندر سے توڑا گیا ہے۔

معاون خصوصی نے کہا کہ بلاول آرمی چیف اورڈی جی آئی ایس آئی سے تحقیقات کی اپیل کرتے ہیں اور کیپٹن (ر)صفدر کہتے آرمی چیف اور ڈی جی آئی ایس آئی کو نوٹس لینا چاہیے جبکہ مریم نوازالگ بات کرتی ہیں عدلیہ اور حکومت کو نوٹس لینا چاہیے۔

ڈاکٹر شہباز گل کا کہنا تھا کہ مریم نوازکوپروفیشنل کیمرہ مین کی ویڈیوشیئرکرنی چاہیے، لندن سےمن پسندصحافی اورچینل کوویڈیو جاری کی گئی، اصل میں ان لوگوں نےمریم نوازکومادرملت بناناہے۔

انھوں نے مزید کہا گڑگڑاکراین آراومانگاجارہاتھاجونہیں ملا، کہاگیاان کی بیٹی کانوازشریف کی تیمارداری کےلیےجاناضروری ہے، اشرافیہ اورعوام کے لئے قانون کی روش بدلنی پڑے گی۔

معاون خصوصی کا کہنا تھا خواتین کی عزت کی بات ہےتوجیلوں میں خواتین کیوں ہیں؟ مریم نوازکوملک کےخلاف بیانیہ بنانے کے لیے چھوڑا ہے تو دیگرخواتین کو بھی چھوڑیں، دہشت گردی میں ملوث خواتین بند رکھیں دیگرکو چھوڑیں، یہ وہ دہرے معیار ہیں جن پرچل کر یہ بادشاہ بنتے ہیں۔

ڈاکٹر شہباز گل نے کہا کہ کیپٹن (ر)صفدرکو پکڑنا ہوتا تو اور طریقوں سے پکڑا جاسکتا ہے، ان کو سندھ میں ایسے جرم پر پکڑا جائے گا، جس کی ضمانت ہوجائے، منہ بولے بھائی بہن نے یہ ڈرامہ رچایا ہے یا بلاول نے بدلہ لیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ کراچی میں کیپٹن صفدر کو پکڑا گیا تو بھارت میں خانہ جنگی کی خبریں چلیں، یہ سب کچھ پلانٹڈ تھا،بھارت کے مستند چینلز پر خبریں چلیں، عوام کو اندازہ نہیں یہ ملک کے لیے کونسے گڑھے کھودنے کی کوشش کررہےہیں۔

معاون خصوصی نے مزید کہا کہ میجرکللکرنی کہہ رہاتھاکوئی شک نہیں پاکستان میں خانہ جنگی ہورہی ہے، ان کاسوداتویہ ہےکہ کرپشن کیسزسےجان چھڑائی جائے، بدلےمیں فوج ،سی پیک اور چین کونشانہ بنایاجارہاہے،مریم صفدرصرف تب جھوٹ نہیں بولتیں جب نہیں بولتیں۔

ڈاکٹر شہباز گل کا کہنا تھا کہ مریم صفدرکی تعلیم اچھی نہیں ،ڈرامہ بناتی ہیں جوفیل ہوجاتاہے، اب ان سےیہ بیانیہ چل نہیں رہا،کل بلوچ طلبا کواستعمال کرنے کی کوشش کی، دوسرابیانیہ ہےاپنی کرپشن بچانےکےلیےعالمی اسٹیبلشمنٹ کی مددلیناہے، عالمی اسٹیبلشمنٹ کامقصدفوج کوہدف بناناہے، تیسرا ایجنڈا نوازشریف صاحب کوانقلابی بناناہے۔

انھوں نے کہا کہ سب سےپہلےنوازشریف کوخودقانون پرعمل کرناچاہیے، ان کوپاکستان آکرسزائیں بھگتناچاہییں، پہلےتویہ طےکرلیں کہ یہ انقلابی ہیں یافالتوہیں، اگرآپ واپس نہ آئیں تویادرکھیں عمران خان جو طے کرلے وہ کرتا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں