The news is by your side.

Advertisement

شہباز شریف کی آئندہ 2 روز میں برطانیہ روانگی کا امکان، شریف خاندان کی تردید

لاہور : اپوزیشن لیڈرشہبازشریف کی آئندہ دورروزمیں برطانیہ روانگی کا امکان ہے ، شہبازشریف اپنی بہو اور پوتی سے برطانیہ میں ملاقات کریں گے تاہم  ترجمان شریف فیملی نے تردید کی ہے شہباز شریف ملک سے باہر نہیں جارہے۔

تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ ن کے ذرائع کا کہنا ہے اپوزیشن لیڈر شہباز شریف آئندہ 72گھنٹوں میں برطانیہ روانہ ہوسکتے ہیں، شہباز شریف کی برطانیہ روانگی کا مقصد اپنی بہو اور پوتی سے ملاقات کے ساتھ ساتھ وہاں موجود ڈاکٹرز سے اپنے طبی مسائل پر بات چیت کرنا ہے اس حوالے سے شہباز شریف  نے برطانیہ میں مقیم اپنے ڈاکٹرز سے رابطہ بھی کیا ہے۔

شہباز شریف ملک سے باہر نہیں جارہے، ترجمان شریف فیملی


دوسری جانب ترجمان شریف فیملی نے شہبازشریف کہ بیرون ملک روانگی کی خبروں پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ اپوزیشن لیڈر کا نام ای سی ایل سے اخراج کے حوالے سے ابھی لاہور ہائی کورٹ کا حکم نامہ نہیں ملا۔

ترجمان کا کہنا تھا کہ شہباز شریف ملک سے باہر نہیں جارہے، اس حوالے سے چلنے والی خبریں بے بنیاد ہیں، شہبازشریف فی الوقت پاکستان میں ہی ہیں اور ان کی بیرون ملک روانگی تکنیکی مسائل سے مشروط ہے، جسے حل کرنے کا اختیار وفاقی حکومت کے پاس ہے۔

یاد رہے 26 مارچ کو لاہور ہائی کورٹ نے شہباز شریف کا نام ای سی ایل سے نکالنے کا حکم دیا تھا، ان کا نام گزشتہ ماہ نیب کی سفارش پر ای سی ایل میں ڈالا گیا  تھا، جس کے خلاف 28 فروری کو شہباز شریف نے اپیل دائر کی تھی۔

مزید پڑھیں : لاہورہائی کورٹ کا شہباز شریف کا نام ای سی ایل سے نکالنے کا حکم

فروری میں ہی لاہور ہائی کورٹ میں جسٹس ملک شہزاد اور جسٹس مرزا وقاص پرمشتمل بینچ نے شہبازشریف کی رمضان شوگر ملز اور آشیانہ اسکینڈل کیسز درخواست ضمانت پرسماعت کرتے ہوئے ان کی ضمانت منظور کی تھی اور 10 ، 10لاکھ کے 2 ضمانتی مچلکے جمع کرانے کی ہدایت بھی کی تھی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں