The news is by your side.

Advertisement

جناح اسپتال میں شہباز، نواز ملاقات، علاج پر تحفظات، میڈیکل بورڈ کی سفارشات پر عمل درآمد کا مطالبہ

لاہور: مسلم لیگ کے صدر شہباز شریف نے جناح اسپتال میں میاں نواز شریف کی عیادت کی، اس موقع پر مختلف امور پر تبادلہ خیال ہوا۔

تفصیلات کے مطابق آج سابق وزیر اعلیٰ پنجاب نے مسلم لیگ ن کے قائد میاں نواز شریف کی عیادت کی، جس کے بعد انھوں نے میڈیا سے غیررسمی گفتگو کی.

شہباز شریف نے کہا کہ نوازشریف کی صحت اور علاج پرتحفظات ہیں، نواز شریف کے علاج کے لئے حکومت بورڈ کی سفارشات پر عمل کرے، علاج میں کسی قسم کی تاخیر نہیں ہونی چاہیے.

اس موقع پر بھارتی پروپیگنڈے سے متعلق سوال پر شہباز شریف نے کہا کہ یہ سارا کیا دھرا بھارت کا ہے، آج کشمیر میں جو کچھ ہو رہا ہے، اس کا ذمہ دار نزیندر مودی ہے.

اس موقع پر انھوں‌ نے حکومت کے خلاف اپوزیشن جماعتوں کے اتحاد کے سوال پر  موقف دینے سے اجتناب کیا.

مزید پڑھیں: جیل بھیجا جارہا ہے، جیل جانے کی بجائے اسپتال میں چیک اپ کرانا چاہتا ہوں ، نوازشریف

خیال رہے کہ سابق وزیر اعظم نوازشریف نے آج چیک اپ کے لیے نئی درخواست دائر کی ہے، جس میں  موقف اختیار کیا کہ مجھے اسپتال سےڈسچارج کر کے جیل بھیجا جارہا ہے ، جیل کی بجائے اسپتال میں چیک اپ کرانا چاہتا ہوں۔

ان کا کہنا تھا کہ وزارت داخلہ پنجاب کی جانب سے میرا میڈیکل چیک اپ کرایا گیا ، لیکن مجھے مزید چیک اپ ، انتہائی احتیاط اور مختلف ٹیسٹ کی ضرورت ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں