The news is by your side.

Advertisement

شہباز شریف کی ملا حسن اخوند سے فون پر گفتگو، سرحد پر دو کراسنگ پوائنٹس کھول دیے گئے

اسلام آباد: وزیر اعظم شہباز شریف نے افغانستان کے قائم مقام وزیر اعظم ملا حسن اخوند سے ٹیلیفونک گفتگو میں زلزلے میں قیمتی جانوں کے ضیاع پر اظہار افسوس کیا۔

تفصیلات کے مطابق میاں شہباز شریف اور ملا حسن اخوند کے درمیان فون پر گفتگو ہوئی ہے، جس میں وزیر اعظم پاکستان نے انھیں آگاہ کیا کہ علاج اور آمد و رفت کے لیے پاک افغان سرحد پر غلام خان اور انگور اڈہ بارڈر کراسنگ پوائنٹس کھول دیے گئے ہیں۔

وزیر اعظم شہباز شریف نے زلزلے میں قیمتی جانوں کے ضیاع پر پاکستان کی حکومت اور عوام کی جانب سے افسوس اور ہمدردی کا اظہار کیا، اور جاں بحق افراد کے لیے مغفرت اور زخمیوں کی جلد صحت یابی کی دعا کی۔

شہباز شریف نے کہا پاکستان مشکل کی اس گھڑی میں اپنے افغان بھائیوں کے ساتھ کھڑا ہے، ہم نے علاج، آمد و رفت کے لیے غلام خان اور انگور اڈہ بارڈر کراسنگ پوائنٹس کھول دیے ہیں، آنے والے دنوں میں مزید مدد جاری رکھیں گے۔

افغانستان زلزلہ، جاں بحق افراد کی تعداد 950 تک جا پہنچی

شہباز شریف نے افغان قائم مقام وزیر اعظم سے تعاون اور امدادی کوششوں پر تبادلہ خیال کیا، اور سنگین صورت حال کا سامنا کرنے والے افغان عوام کو مدد فراہمی کے عزم کا اعادہ کیا، وزیر اعظم نے مؤثر بارڈر مینجمنٹ سے تجارت اور نقل و حرکت کے لیے اقدامات پر بھی روشنی ڈالی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں