The news is by your side.

Advertisement

میں دنیا کا خطرناک ترین انسان ہوں ، شہباز شریف

میں نے رمضان شوگر ملز کے حوالے سے کوئی فائدہ اٹھایا نہ تعلق ہے

لاہور : لاہور احتساب عدالت میں رمضان شوگر ملز کیس میں اپوزیشن لیڈر قومی اسمبلی شہباز شریف نے بیان میں کہا میں دنیا کے خطرناک ترین انسان ہوں ، مگر عوامی خدمت میں بے ایمانی نہیں کی، میں نے رمضان شوگر ملز کے حوالے سے کوئی فائدہ اٹھایا نہ تعلق ہے۔

تفصیلات کے مطابق لاہور کی احتساب عدالت میں رمضان شوگر ملز کیس کی سماعت ہوئی ، احتساب عدالت کے جج ارشد نعیم نے کیس کی سماعت کی۔ نیب ٹیم نے حمزہ شہباز کو عدالت کے روبرو پیش کیا جبکہ شہباز شریف بھی عدالت میں موجود تھے۔

شہباز شریف نے عدالت کے روبرو بیان قلمبند کراتے ہوئے کہا کہ مجھے ایک دن قبر میں جانا ہے اللہ کی عدالت میں پیش ہونا ہے ، میں اگر جھوٹ بولوں گا تو مجھے اللہ سزا دے، عدالت میں جو بتاؤں گا حقائق اور دستاویزات پر مبنی ہو گا، عدالت کا وقت ضائع نہیں کروں گا نہ اپنے کارنامے یہاں سناؤں گا، آج صرف رمضان شوگر ملزسےمتعلق عدالت کو حقائق سےآگاہ کروں گا۔

اپوزیشن لیڈر قومی اسمبلی کا اپنے بیان میں کہنا تھ حقائق عدالت کو بتاؤں گا اس سے ثابت ہو گاکیس جھوٹا ہے میں دنیا کا خطرناک ترین انسان ہوں مگراللہ کو حاضر ناظر جان کر کہتا ہوں عوامی خدمت میں کوئی بے ایمانی نہیں کی۔

انھوں نے کہا میں نے رمضان شوگر ملز کے حوالے سے کوئی فائدہ اٹھایا نہ تعلق ہے ، میرے بچے خودمختار ہیں اور وہ کاروبار کودیکھتے ہیں ، جھوٹےمقدمے بنا کر میری تذلیل کر رہے ہیں۔

شہباز شریف کا عدالت میں کہنا تھا عوام کو کیا پیغام دینا چاہتے ہیں، 2015 میں گنےکی قیمت زیادہ اور چینی فروخت نہیں ہو رہی تھی، مجھےمیرےخاندان کے لوگوں نےکہاگنے کی قیمت کم کر دوں، میں نے گنے کے کاشتکاروں کو نقصان سے بچانے کے لیے قیمت کم نہیں کی۔

ن لیگی رہنما نے کہا سندھ میں بھی یہی صورتحال پیدا ہوئی تو لوگ ہائیکورٹ چلے گئے، سندھ حکومت نے اس پر اربوں کی سبسڈی دی ، سندھ سے سبسڈی ملنےکے بعد تمام سٹیک ہولڈرز میرے ارد گرد جمع ہو گئے کہ قیمت کم کرو۔

شہباز شریف کا مزید کہنا تھا میرے بچوں سمیت ملز مالکان کااربوں کا نقصان ہوا، لیکن میں نے کہا کہ مجھے استعفی دینا پڑےتو دوں گامگر قیمت کم نہیں کروں گا۔

خیال رہے رمضان شوگر ملز میں شہباز شریف اور حمزہ شہباز پر فردجرم کی جا چکی ہے، عدالت نے شہادتوں کے لیے گواہان کو بھی طلب کر رکھاہے ۔

Comments

یہ بھی پڑھیں