شہبازشریف کی ہدایات نظرانداز، صوبائی وزیرعدلیہ پربرس پڑے -
The news is by your side.

Advertisement

شہبازشریف کی ہدایات نظرانداز، صوبائی وزیرعدلیہ پربرس پڑے

لاہور : صوبائی وزیر اطلاعات میاں مجتبیٰ شجاع الرحمان نے وزیر اعلیٰ پنجاب کی واضح ہدایت کے باوجود عدلیہ کیخلاف بیان دیتے ہوئے کہا ہے کہ عدلیہ سابق وزیراعظم نوازشریف کا راستہ نہیں روک سکتی۔

تفصیلات کے مطابق شہبازشریف کا حکم ان کے ہی وزیر نے نظر انداز کر دیا، وزیر اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف کے قومی اداروں کے حوالے سے ارکان اسمبلی، وزراء اور پارٹی عہدیداروں کو بیانات جاری نہ کرنے کی ہدایات کو صوبائی وزیر اطلاعات میاں مجتبی شجاع الرحمان نے ہوا میں اڑا دیا۔

 لاہور پریس کلب میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے صوبائی وزیر اطلاعات مجتبی شجاع الرحمان اعلیٰ عدلیہ کے پانامہ کیس کے فیصلے پر برس پڑے۔

ان کا کہنا تھا کہ عدلیہ کی جانب سے نوازشریف کو نا اہل کرنے کے فیصلے کو عوام نے مسترد کردیا ہے، ہم نے عدلیہ کے فیصلے کو قبول کیا اور آئین کے اندر رہتے ہوئے نظرثانی کی درخواست ڈال دی ہے۔

انہوں نے کہا کہ عدلیہ نواشریف کا راستہ نہیں روک سکتی، اس موقع پر رانا مشہود کا کہنا تھا کہ مشرف کا بھوت نہیں باقیات مختلف اداروں میں موجود ہے جنہیں نکالنے کی کوشش کی جا رہی ہے۔


مزید پڑھیں: شہبازشریف نے اراکین کو اداروں کیخلاف بیان سے روک دیا


واضح رہے کہ وزیراعلیٰ پنجاب شہبازشر یف نے قومی اداروں کے حوالے سے بیان بازی پر پابندی عائد کردی ہے۔ شہباز شریف کا کہنا ہے کہ صوبائی اسمبلی کا کو ئی رکن یا صوبائی وزیر قومی ادارو ں کے حوالے سے منفی بیان بازی ہر گزنہیں کرےگا۔

شہبازشریف کا کہنا تھا کہ پاکستان اداروں کے درمیان تصادم کا متحمل نہیں ہوسکتا۔ پارٹی رہنما اورعہدیدار قومی اداروں کیخلاف بیانات سے احتراز کریں اور ایسے بیانات سے گریز کریں جو اداروں کے وقاراوراحترام کے منافی ہوں۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں