The news is by your side.

Advertisement

طالبان کی قید سے رہائی پانے والے شہباز تاثیر نے بالاخر زبان کھول دی

کراچی: طالبان کی قید میں پانچ برس گزارنے کے بعد رہائی پانے والے شہباز تاثیر نے بالاخر زبان کھول دی اور اغواء کاروں کے ظلم و ستم کی داستان بیان کردی۔

برطانوی خبر رساں ادارے کو انٹرویو میں شہباز تاثیر نے بتایا کہ انھیں اسلامک موومنٹ آف ازبکستان نے اغواء کیا تھا، شروع میں کوڑے مارنے شروع کیے۔ اس کے بعد کمر کو بلیڈ سے کاٹا، پلاس سے کھینچ کرکمر سے گوشت نکالا، پھر ہاتھوں اور پیروں کے ناخن نکالے گئے۔

شہباز تاثیر نے بتایا کہ انھیں زمین میں دبا دیا جاتا تھا، ایک مرتبہ تو سات روز زمین میں دبا کر رکھا گیا، ان کا کہنا تھا کہ ان کا منہ سوئی دھاگے سے سی دیا گیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ ان کی رہائی کیلئے کوئی تاوان نہیں دیا گیا بلکہ طالبان کی آپس کی لڑائی ان کی رہائی کا سبب بنی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں