The news is by your side.

Advertisement

نواز شریف نےکبھی علاج سےانکارکیانہ بیرون ملک علاج کی خواہش کی، شاہد خاقان عباسی

اسلام آباد : مسلم لیگ ن کے رہنما شاہدخاقان عباسی کا کہنا ہے نوازشریف نےکبھی علاج سےانکارکیانہ بیرون ملک علاج کی خواہش کی، وفاق اور پنجاب  حکومت کی کوششوں کےباوجودعدالت سےعلاج کیلئے ریلیف ملا ، امید ہے اپیل میں بھی ریلیف ملےگا۔

تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ ن کے رہنما شاہدخاقان عباسی نے سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد میڈیا سے گفتگو میں کہا عدالت نےنوازشریف کوعلاج کے لیے ریلیف دیا، ان سب کاشکرگزارہوں جنہوں نےنوازشریف کےلیےدعاکی، وفاقی اورپنجاب حکومت کی کوششوں کےباوجودنوازشریف کوریلیف ملا۔

شاہدخاقان عباسی کا کہنا تھا کہ نوازشریف کےعلالت پرحکومتی وزراکاجھوٹ عوام کےسامنےآگیا، ایک سیاسی رہنما کی علالت کو طنز کا نشانہ بنانے پر کیا کہہ سکتا ہوں، سامنے آگیا کہ نواز شریف نے طبی امداد سے کبھی انکار نہیں کیا۔

نوازشریف کےعلالت پرحکومتی وزراکاجھوٹ عوام کےسامنےآگیا

مسلم لیگ ن کے رہنما نے کہا کوئی بھی ڈاکٹرفیصلہ نہیں کر پارہا تھا اور صحت نواز شریف کی متاثر ہورہی تھی، نواز شریف نے کبھی علاج سے انکار نہیں کیا، آج نواز شریف کا علاج سے انکار کا تاثر ختم ہوگیا، اس طرح کی سیاست ملک میں نہیں چل سکتی ، حکومت عوام اوران کے مسائل کی طرف توجہ دے۔

ان کا کہنا تھا امیدہےعدالتوں سےریلیف ملتا رہےگا، نہ حکومت نے کبھی کہا کہ آپ کہیں بھی علاج کرالیں، کوئی ڈاکٹر فیصلہ نہیں کر پایا کہ علاج کیا اور کہاں ہوگا، نواز شریف نے کبھی بیرون ملک جانے پر اصرار نہیں کیا۔

امیدہےعدالتوں سےریلیف ملتا رہےگا

شاہدخاقان عباسی نے کہا جہاں بھی ملک کا فائدہ ہو وہ سیاست جاری رہےگی، حکومت اور وزرا کے رویے سے عوام کے مسائل حل نہیں ہوسکے، 8 ماہ میں ایک بحث  اسمبلی میں نہ ہوسکی، ذمے دار اسپیکر اور حکومت ہے، مثالی کم ظرفی کامظاہرہ کرنے والے عوام کی فکر کریں۔

یاد رہے سپریم کورٹ نے نوازشریف کی طبی بنیادوں پرضمانت کی درخواست منظور کرلی، درخواست ضمانت50 لاکھ کے مچلکوں اور 2شخصی ضمانتوں پر منظور کی گئی ۔

مزید پڑھیں : نوازشریف کی درخواست ضمانت 6 ہفتے کے لیے منظور، سزا معطل

عدالت نے نوازشریف کو چھ ہفتے کیلئے ضمانت پر رہا کرنے کا حکم دیتے ہوئے سزا معطل کردی اور ان کے بیرون ملک جانے پر پابندی لگادی

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں