سندھ حکومت کی ایما پر جیل میں زیادتیاں کی جارہی ہیں، شاہد پاشا Karachi
The news is by your side.

Advertisement

سندھ حکومت کی ایما پر جیل میں زیادتیاں کی جارہی ہیں، شاہد پاشا

کراچی: سینٹرل جیل سے رہائی پانے والے ایم کیو ایم کے ڈپٹی کنوینر شاہد پاشا نے کہا ہے کہ قید میں سندھ حکومت کی ایما پر زیادتیاں کی جاتی ہیں، انتقامی کارروائیوں کے ذریعے ہمارے دلوں سے پاکستان کی محبت کوئی نہیں نکال سکتا۔

تفصیلات کے مطابق ایم کیو ایم کے ڈپٹی کنوینر شاہد پاشا رہائی کے بعد متحدہ پاکستان کے مرکز بہادر آباد پہنچے جہاں قیادت اور کارکنان نے اُن کا پرتپاک استقبال کیا۔

اس موقع پر ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے شاہد پاشا نے کہا کہ کبھی کے دن بڑے تو کبھی کی راتیں بڑی ہوتی ہیں، کل ایم کیو ایم پاکستان کی حکومت بھی ہوسکتی ہے پھر کوئی ہم سے شکایت نہ کرے۔

انہوں نے کہا کہ میں بے گناہ کارکن ہونے کے باوجود 11 ماہ کی جیل کاٹ کے آرہا ہوں، جیل انتظامیہ نے گزشتہ 15 روز سے ہمارے کارکنان کے ساتھ ناروا سلوک رکھا ہوا ہے، ہمارے 600 سے زائد بے گناہ کارکنان جیل کاٹ رہے ہیں۔

پڑھیں: متحدہ رہنما قمر منصور جیل سے رہا

شاہد پاشا نے الزام عائد کیا کہ جیل انتظامیہ نے ہم سے عید کے کپڑے تک چھین لیے تھے، ایم کیو ایم کے کارکنان کو عدالت کی پیشی کے وقت پیش نہیں کیا جاتا، جیل انتظامیہ نے یہ رویہ سندھ حکومت کی ایما پر رکھا ہوا ہے۔

ایم کیو ایم کے رہنماء نے کہا کہ ہمیں پاکستان سے محبت کی سزا دی جارہی ہے، بائیس اگست کو میں پریس کلب پر موجود نہیں تھا مگر مجھے گرفتارکیا گیا اور جھوٹے مقدمات میں نامزد بھی کیا گیا۔

مزید پڑھیں: متحدہ رہنما کنور نوید جمیل جیل سے رہا

شاہد پاشا نے چیف جسٹس آف پاکستان سے ایپل کی کہ وہ خود جیل کا دورہ کریں اور قیدیوں کی حالات زار دیکھیں۔ متحدہ رہنماء نے سندھ حکومت کو متنبہ کرتے ہوئے کہا کہ آج آپ کی ایما پر جیل انتظامیہ مظالم کررہی ہے مگر ممکن ہے کہ آنے والی حکومت ایم کیو ایم پاکستان کی ہو ، کل جب ہماری حکومت آئے تو کوئی ہم سے شکایت نہ کرے۔

اس موقع پر خالد مقبول صدیقی نےکہا کہ ایم کیو ایم کے رہنماؤں اور کارکنان پر جھوٹے مقدمات بنا کر انہیں جیل میں رکھا ہوا ہے، ایم کیو ایم کے کارکنان نے جیلوں میں رہ کر بھی قومی شعور پر لبیک کہا ہم حکومت کو متنبہ کرتے ہیں کہ انتقامی کارروائیوں سے باز رہے کیونکہ اس طرح ہمارے کارکنان کے عزم کو کمزور نہیں کیا جاسکتا۔

یاد رہے بائیس اگست کو پریس کلب پر بانی ایم کیو ایم کی جانب سے ملک مخالف تقریر کی گئی تھی جس کے بعد قانون نافذ کرنے والے اداروں نے ایم کیو ایم رہنماؤں سمیت متعدد کارکنان کو گرفتار کیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں