The news is by your side.

Advertisement

شیر کا نشان زحمت بن گیا، مسلم لیگ ن کے امیدواران ٹکٹ واپس کررہے ہیں، شاہ محمود

ملتان: تحریک انصاف کے وائس چیئرمین محمود قریشی نے کہا ہے کہ مسلم لیگ ن واضح طور پر دو حصوں میں تقسیم ہوچکی، امیدواران سمجھ چکے کہ شیر کا نشان زحمت ہے اس لیے وہ آزاد حیثیت سے الیکشن لڑ رہے ہیں۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے ملتان میں راجن بخش گیلانی کی پی ٹی آئی میں شمولیت کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ ملک کا دینی طبقہ تحریک انصاف کا حامی ہے، علماء کی حمایت سے ہی ہمارے نظریے اور سیاست کو تقویت ملی۔

اُن کا کہنا تھا کہ مسلم لیگ ن کو صفائی پیش کرنے کا موقع ملا جسے انہوں نے ضائع کیا، آج ن لیگ کے قائد نوازشریف اور صدر شہباز شریف کے علیحدہ علیحدہ پالیسی بیان سامنے آرہےہیں جو پارٹی میں دراڑ کی واضح عکاسی ہے۔

تحریک انصاف کے وائس چیئرمین کا کہنا تھا کہ مسلم لیگ ن میں پڑھنے والی دراڑ سے لوگوں میں مایوسی پیدا ہوئی جس کی وجہ سے انہوں نے جنوبی صوبہ محاذ تحریک بنائی، آج مسلم لیگ ن کو امیدواران نے پارٹی ٹکٹ واپس کردیے کیونکہ وہ  یہ سمجھتے ہیں کہ شیر کا نشان اُن کے لیے زحمت بنا چکا اس لیے وہ انتخابی میدان میں آزاد حیثیت سے کھڑے ہورہے ہیں۔

شاہ محمود قریشی کا مزید کہنا تھا کہ ملک کی دونوں بڑی جماعتیں ناکام ہوچکی یہی وجہ ہے کہ پیپلزپارٹی کے رہنما منظور وٹو جیسے سینئر سیاستدان نے بھی ٹکٹ نہیں تیر کا نشان نہیں لیا،  اُن کا بیٹا اور بیٹی بلے کے نشان پر الیکشن لڑ رہے ہیں، ملک کی ۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں