The news is by your side.

Advertisement

ن لیگ کی بی ٹیم کو جھوٹ بولنے کی عادت ہوچکی ہے، شہزاد اکبر

اسلام آباد: معاون خصوصی برائے احتساب شہزاد اکبر نے کہا ہے کہ ن لیگ کی بی ٹیم کو جھوٹ بولنے کی عادت ہوچکی ہے۔

تفصیلات کے مطابق معاون خصوصی برائے احتساب شہزاد اکبر نے نیوز کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ ن لیگ کی بی ٹیم کے بھی کئی کارنامے ہیں، ن لیگ کی بی ٹیم بھی کرپشن چھپانے اور پردہ ڈالنے کی کوشش کررہی ہے۔

شہزاد اکبر نے کہا کہ 18 سوالوں کے جواب کے لیے شہباز شریف کو تلاش کررہا ہوں، شہباز شریف سے تقاضا کیا جارہا ہے کہ سرکاری زمین کا معاوضہ دیں۔

انہوں نے کہا کہ پارلیمنٹ میں ایک سوال کو لے کر مریم اورنگزیب نے کانفرنس کی، وہ لوگوں کو گمراہ کرنا چھوڑ دیں، مریم اورنگزیب ذرا شہباز شریف سے میرے سوال کا جواب دلوادیں۔

شہزاد اکبر نے کہا کہ تنقید کرنے والوں کو ایسٹ ریکوری یونٹ کی کارروائی سمجھنے کی ضرورت ہے، 35 سال اقتدار میں رہنے والوں نے سرکاری زمینوں پر قبضہ کررکھا ہے، سرکاری اراضی واگزاری پر واویلا کیا جارہا ہے۔

مزید پڑھیں: کرپشن کے خلاف جنگ استحصالی سیاسی نظام کے خلاف جنگ ہے: شہزاد اکبر

انہوں نے کہا کہ ایسٹ ریکوری یونٹ کا مقصد لوٹی دولت کو واپس لانا ہے، جو ریکوری ہوتی ہے سارے پیسے قومی خزانے میں جاتے ہیں، 2018 میں سپریم کورٹ کو پیش سفارشات پر ایسٹ ریکوری یونٹ بنا تھا۔

معاون خصوصی برائے احتساب نے کہا کہ ایف آئی اے نے گزشتہ ایک برس میں 7 ارب کی وصولیاں کیں، ایسٹ ریکوری یونٹ پر اب تک 2 کروڑ 30 لاکھ روپے خرچ ہوئے ہیں، 2 کروڑ 30 لاکھ روپے میں یونٹ کے اہلکاروں کی تنخواہیں شامل ہیں۔

شہزاد اکبر نے کہا کہ اینٹی کرپشن نے 129 ارب روپے کی زمین واگزار کرائی، موجودہ دور حکومت میں ہر چیز کا جواب دیا جاتا ہے پہلے کوئی نہیں دیتا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں