The news is by your side.

Advertisement

شہزاد اکبر کا شہباز شریف کو مشورہ

اسلام آباد: مشیر داخلہ برائے احتساب شہزاد اکبر نے اپوزیشن لیڈر کو مشورہ دیا ہے کہ وہ سلمان شہباز کو واپس بلا لیں کہ کہیں وہ گرفتار ہی نہ ہو جائیں۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر جاری بیان میں شہزاد اکبر نے لکھا کہ شہبازشریف نےمجھےلندن کی عدالت لےجانےکاوعدہ کیاتھا، شہبازشریف کاوعدہ ایک سال بھی وفانہ ہوسکا، شہبازشریف کاوعدہ ایسےتھاجیسےزرداری کوگلیوں میں گھسیٹنےکاعزم کیاتھا۔

شہزاد اکبر نے کہا کہ ویسے اب تک منی لانڈرنگ کا ریفرنس بھی فائل ہوچکا ہے، شہبازشریف کومشورہ ہےسلمان کوواپس بلالیں کہیں وہاں پکڑنہ ہوجائے۔

خیال رہے شہباز خاندان کے خلاف7ارب35 کروڑ کی منی لانڈرنگ کاریفرنس دائر ہے۔

نیب نے منی لانڈرنگ ریفرنس میں شہباز شریف خاندان کیخلاف گواہی دینے والے 110 افراد کی فہرست تیار کرلی ہے ، گواہ نیب کے مؤقف کی تائید کریں گے۔

گواہوں میں بینکوں کےنمائندے،ایف بی آر،پٹواری اورسرکاری محکموں کےافراد ، نیب کے اسٹنٹ ڈائریکٹر،انویسٹی گیشن آفیسر بھی شامل ہیں ، دستاویزات میں بتایا گیا کہ شہبازشریف خاندان کےخلاف110گواہ نیب کے مؤقف کی تائید کریں گے۔

شہباز شریف خاندان کے خلاف 4وعدہ معاف بھی نیب کےمؤقف کی تائیدکریں گے ، وعدہ معاف گواہوں میں مشتاق چینی،یاسرمشتاق ،شعیب قمراور محبوب علی شامل ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں