The news is by your side.

Advertisement

شہبازشریف فیملی منی لانڈرنگ :شریف خاندان کے فرنٹ مین نے اہم راز اگل دئیے

لاہور : شریف خاندان کے فرنٹ مین مشتاق عرف چینی نے شہبازشریف فیملی منی لانڈرنگ کیس میں دوران تفتیش اہم رازاگل دئیے، رمضان شوگرملز کے  منیجر نے اعتراف کیا کہ ہانگ کانگ اور دبئی سے رقوم اس کےاکاؤنٹ میں آتی تھیں، پھر رقوم شہباز فیملی کےاکاؤنٹ میں منتقل ہوتیں۔

تفصیلات کے مطابق رمضان شوگرملز کے منیجر اور شریف خاندان کے فرنٹ مین مشتاق عرف چینی کو 14روزہ جسمانی ریمانڈکےبعد احتساب عدالت میں پیش کیا گیا۔

نیب نے عدالت کو بتایا کہ مشتاق نے اعتراف کیا کہ رقوم شہباز فیملی کے اکاؤنٹ میں منتقل کیں اور تفتیش میں بہت سےاکاؤنٹ سامنےآئے، باہر سے رقوم مشتاق عرف چینی کے اکاؤنٹ میں آتی تھیں اور مشتاق عرف چینی سے سلمان شہباز کے اکاؤنٹ میں ٹرانسفر ہوتی۔

نیب کا کہنا تھا ہانگ کانگ اور دبئی سےرقوم مشتاق کےاکاؤنٹ میں آتی تھیں، جتنی رقم باہرسےآتی وہ سب کی سب سلمان شہباز کو ٹرانسفر ہوتی۔

نیب تفتیشی افسر نے کہا مشتاق عرف چینی کےجسمانی ریمانڈمیں توسیع کی استدعا کی اور کہا تفتیش مکمل کرنے کے لیے مزید جسمانی ریمانڈ دیاجائے۔

وکیل نیب نے بتایا مشتاق چینی نے کہا 60کروڑ میں سے 40سلمان شہباز کے تھے ، بیس کروڑ کی مشتاق چینی نےسرمایہ کاری کی ، اکاؤنٹ میں جورقم باہر سے آئی اس کا علم نہیں، جس پر وکیل صفائی نے کہا جتنی رقم کے ٹرانسفرکاالزام ہے وہ سب کاروباری لین دین ہے۔

تفتیشی افسر کا کہنا تھا 60کروڑ کس نےمشتاق چینی اورسلمان شہباز کےاکاؤنٹ میں ڈالےکچھ پتہ نہیں ، جس پر عدالت نے کہا کون سا قانون کہتا ہے کہ کاروباری حضرات کو کھلی چھوٹ ہے ، کاروبار بھی کسی قانون اور ضابطے کے تحت ہی کیا جا سکتا ہے۔

مزید پڑھیں : شریف خاندان کا فرنٹ مین مشتاق چینی 14 روزہ ریمانڈ پر نیب کے حوالے

وکیل صفائی نے کہا سلمان شہباز کی جانب اب بھی مشتاق چینی کی رقم واجب الاداہے، مشتاق چینی کےہر سال کےٹیکس ریٹرن نیب کو جمع کرا دیےہیں ، ملزم کےجسمانی ریمانڈکی ضرورت نہیں تعاون کریں گے۔

وکیل مشتاق چینی کا کہنا تھا چینی مشتاق چینی کو نیب مناسب طبی امداد نہیں دے رہی، ہمیں انکوائری کےحوالے سےاطلاع تک نہیں دی گئی اورملک سے باہر علاج کے لیے جاتے ہوئے گرفتار کر لیا گیا۔

یاد رہے مشتاق چینی کو بیرون ملک فرار ہوتے ہوئے لاہور ایئر پورٹ سے گرفتار کیا گیا تھا، محمد مشتاق چینی پی آئی اے کی پرواز 203 سے دبئی روانہ ہو رہا تھا تاہم اس کا نام ای سی ایل میں شامل ہونے پر اسے آف لوڈ کردیا گیا تھا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ مشتاق چینی نے سلمان شہباز کے اکاؤنٹ میں 60 کروڑ روپے کی ٹرانزیکشن کی تھی اور حمزہ شہباز کی ماڈل ٹاؤن میں گرفتاری کے موقع پر روپوش ہوگیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں