The news is by your side.

Advertisement

یو اے ای: بغیر دستاویزات والی لڑکی پاکستانی شخص کی بیٹی قرار

شارجہ: متحدہ عرب امارات کی ریاست شارجہ کی شرعی عدالت نے بغیر قانونی دستاویزات کے رہنے والی 14 سالہ لڑکی کو پاکستانی شخص کی بیٹی قرار دے دیا۔

خلیجی میڈیا رپورٹ کے مطابق 14 سالہ مریم کی پیدائش شارجہ میں ہوئی تھی اور وہ اپنی بنگلادیشی والدہ حلیمہ کے ساتھ رہائش پذیر تھی تاہم لڑکی کے پاس ریاست میں رہنے کی کوئی قانونی دستاویز نہیں تھیں۔

یہ کیس شارجہ کی عدالت میں پیش ہوا جس پر فیصلہ سناتے ہوئے عدالت نے قرار دیا کہ 14 سالہ لڑکی مریم پاکستانی شخص کی بیٹی ہے اور اب وہ پاکستانی شناخت و قانونی دستاویزات کی اہل ہے۔

32 سالہ حلیمہ کا کہنا ہے کہ جب وہ 4 ماہ کی حاملہ تھی تو اس کے پاکستانی شوہر نور محمد خان سے تعلقات ختم ہوگئے تھے، اس کے پاس عجمان میں ہونے والی اپنی شادی کی سند بھی موجود ہے۔

خاتون کے بقول نور محمد خان ٹرک ڈرائیور ہے اور سالوں سے اس کی اور بیٹی کی ملاقات نہیں ہوئی جب کہ مریم کا بھی کہنا ہے کہ اس نے آج تک اپنے والد کو نہیں دیکھا۔حلیمہ ورک ویزہ پر شارجہ میں رہائش پذیر ہے اور گھریلو ملازمہ کے طور پر کام کرتی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں