شرجیل میمن کی کرپشن ریفرنس کالعدم قرار دینے کی درخواست مسترد -
The news is by your side.

Advertisement

شرجیل میمن کی کرپشن ریفرنس کالعدم قرار دینے کی درخواست مسترد

کراچی: نیب عدالت نے شرجیل میمن کی کرپشن ریفرنس کالعدم قرار دینے کی درخواست مسترد کردی۔ امتیازی سلوک کی شکایت پر عدالت نے کہا کہ شرجیل میمن کے لیے پورا اسپتال اٹھ کر جیل آجائے گا، ملزمان سے یکساں سلوک ہونا چاہیئے۔

تفصیلات کے مطابق محکمہ اطلاعات سندھ میں پونے 6 ارب روپے کی کرپشن میں گرفتار ملزم شرجیل میمن کو بکتر بند گاڑی میں عدالت میں پیش کیا گیا۔

سابق وزیر اطلاعات نے عدالت پہنچ کر ساتھیوں سے علیک سلیک کی اور کمر درد کی شکایت بھی کر ڈالی۔

شرجیل میمن نے جج کو جیل حکام کی جانب سے امتیازی سلوک کی بھی شکایت کی۔ انہوں نے کہا کہ علاج کی سہولتیں نہیں دی جا رہیں، کہا جا رہا ہے کہ عدالت نے سہولتیں دینے سے روکا ہے۔

احتساب عدالت نے کہا کہ بعض ملزمان عدالت سے جاتے ہی اسپتال چلے جاتے ہیں۔ شرجیل میمن کے لیے تو پورا اسپتال اٹھ کر جیل آجائے گا، تمام ملزمان سے ایک جیسا سلوک ہونا چاہیئے، وی آئی پی کلچر کا خاتمہ کون کرے گا۔

عدالت نے ملزمان کی ریفرنس کالعدم قرار دینے اور فرد جرم عائد نہ کرنے کی درخواستیں مسترد کرتے ہوئے سماعت 24 نومبر تک ملتوی کردی۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں