شرمین عبید چنائے نے ایک اور عالمی ایوارڈ جیت لیا -
The news is by your side.

Advertisement

شرمین عبید چنائے نے ایک اور عالمی ایوارڈ جیت لیا

نیویارک: آسکر ایوارڈ یافتہ پاکستانی فلم میکر شرمین عبید چنائے نے ٹالبرگ فاؤنڈیشن کی طرف سے ایلیاسن گلوبل لیڈر شپ ایوارڈ برائے 2018 جیت لیا۔

تفصیلات کے مطابق شرمین عبید چنائے پہلی پاکستانی خاتون ہیں جنھوں نے ایلیاسن گلوبل لیڈر شپ ایوارڈ اپنے نام کر لیا ہے، یہ ایوارڈ انھیں فلم سازی کے ذریعے سماجی مسائل کو بہترین طریقے سے اجاگر کرنے پر دیا گیا۔

ججز کے مطابق شرمین عبید کو ان کی بڑھتی ہوئی مستحکم اور مؤثر لیڈر شپ پر ایوارڈ کے لیے چنا گیا جو نہ صرف دماغوں کو تبدیل کرنے کا باعث بنی بلکہ ایسے حقائق سامنے لائی جن کے نتائج اکیسویں صدی میں نا قابلِ قبول ہونے چاہیئں۔

شرمین عبید نے کہا ’مجھے یہ ایوارڈ ایک ایسے موقع پر ملا ہے جب سماج کے سامنے آئینہ لے کر کھڑی ہوں، جو بہت بڑی قیمت چکا رہا ہے، میرے ساتھی دنیا بھر میں سچ کی پاداش میں جیلوں میں ڈالے اور قتل کیے جا رہے ہیں۔‘


یہ بھی پڑھیں:  شرمین عبید چنائے کی آسکرایوارڈیافتہ فلم ’اے گرل ان دا ریور‘ نے ایمی ایوارڈ جیت لیا


انھوں نے کہا کہ ہمیں مسلسل اپنا کام جاری رکھنے کا حوصلہ درکار ہے، میں مشکل مسائل پر اپنا کام جاری رکھوں گی، اس امید پر کہ جو مکالمہ پیدا ہوگا وہ دنیا کو بدل دے گا۔

شرمین عبید کا کہنا تھا کہ ایلیاسن گلوبل لیڈر شپ ایوارڈ جین ایلیاسن کے اعزاز میں شروع کیا گیا ہے جو اپنے وقت کے سب سے قابل عالمی سفارت کاروں میں سے ایک ہیں۔

یاد رہے کہ فلموں کے ذریعے سماجی مسائل کو نمایاں کرنے والی فلم ساز شرمین عبید چنائے متعدد ایوارڈ یافتہ فلمیں بنا چکی ہیں، جن میں سیونگ فیس، آ جرنی آف تھاؤزینٹ مائلز: پیس کیپرز، اور آ گرل اِن دا ریور: دی پرائس آف فارگیونس شامل ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں