The news is by your side.

Advertisement

شوال بارڈر پر شہید تین فوجی جوانوں کی نمازِ جنازہ ادا کردی گئی

ڈی آئی خان: شوال بارڈر پر شہید تین فوجی جوانوں کی نمازِ جنازہ ادا کر دی گئی۔ عسکری و دیگر اہم حکام نے شرکت کی۔

تفصیلات کے مطابق تینوں جوان شمالی وزیر ستان کے علاقے شوال میں پاکستانی پوسٹ پر دہشت گردوں کے حملے کو ناکام بناتے ہوئے شہید ہوئے تھے۔

نمازِ جنازہ میں آئی جی ایف سی میجر جنرل عابد لطیف و دیگر حکام نے شرکت کی، شہدا کی میتوں کو نمازِ جنازہ کے بعد آبائی علاقوں کو روانہ کر دیا گیا۔

پاک فوج کے شعبہ برائے تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق پاک افغان سرحد پر پاکستانی چوکیوں کو نشانہ بنایا گیا تھا، حملے کو ناکام بناتے ہوئے پاک فوج کے جوانوں نے پانچ دہشت گردوں کا ہلاک کردیا تھا۔

سرحد پار سے دہشت گرد حملے میں فائرنگ کے تبادلے میں تین اہل کار بھی شہید ہوئے، جامِ شہادت نوش کرنے والوں میں حوالدار افتخار، سپاہی آفتاب اور سپاہی عثمان شامل ہیں۔

شوال: سرحد پار سے پاکستانی چوکیوں پر حملہ، پانچ دہشت گرد ہلاک، تین جوان شہید


خیال رہے کہ پاک افغان سرحد پر پاکستانی چوکیوں پر تواتر کے ساتھ دہشت گرد حملے ہو رہے ہیں، دوسری طرف پاک فوج سرحد پر دراندازی اور حملے روکنے کے لیے باڑ بھی لگا رہی ہے۔

گزشتہ دنوں آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے افغان صدر کی دعوت پر افغانستان کا دورہ کیا، انھوں نے بھی واضح طور پر کہا کہ سرحد پر باڑ لگانے کا مقصد دہشت گردوں کی آمد کو روکنا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات  کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں