The news is by your side.

سندھ ہائی کورٹ کا پیمرا کو اے آر وائی نیوز کی نشریات بحالی کی تحریری یقین دہانی کرانے کا حکم

کراچی : سندھ ہائی کورٹ نے پیمرا کو اے آر وائی نیوز کی نشریات بحالی کی تحریری یقین دہانی کرانے کا حکم دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق سندھ ہائیکورٹ میں اے آروائی نیوز کی نشریات کی بندش کیخلاف کیس کی سماعت ہوئی۔

پیمرا نے مؤقف میں کہا کہ ہم نے چینل بند نہیں کیا تھا، یہ کیبل آپریٹرز نے کیا، جس پر اے آر وائی نیوز کے وکیل بیرسٹرایان میمن کا کہنا تھا کہ پیمرا کیبل آپریٹرز کی آڑ میں بچنے کی کوشش کررہا ہے۔

اے آروائی نیوز براہِ راست دیکھیں live.arynews.tv پر

سندھ ہائی کورٹ نے پیمرا وکیل سے استفسار کیا کہ چینل بند کرتے ہیں تو کیا 6 ہزار ورکرز کی تنخواہ آپ دیں گے، جس پر وکیل جواب نہیں دے سکے۔

بیرسٹرایان میمن نے استدعا کی کہ چیئرمین پیمرا کو شوکاز جاری کیا جائے، عدالتی حکم کے باوجود پیمرا کی جانب سے کیبل آپریٹر پر کوئی دباؤ نہیں ڈالا گیا۔

عدالت نے چیئرمین پیمرا سے مکالمے میں کہا کہ آپ چینل کوآن کردیں، جس پر وکیل پیمرا نے بتایا کہ ہم نے چینل بند نہیں کیا،یہ معاملہ کیبل آپریٹرز سے تعلق رکھتا ہے، عدالت کا کہنا تھا کہ این اوسی کاکیس علیحدہ معاملہ ہے۔

عدالت نے پیمرا کو تحریری یقین دہانی رجسٹرار کو جمع کرانے کا حکم دیتے ہوئے کہا دیا آپ صرف 2 لائن لکھ دیں اے آر وائی نیوزکی نشریات پر پیمرا کو اعتراض نہیں۔

عدالت کا کہنا تھا کہ ہم پہلےنشریات سے پابندی اٹھانےکاحکم دےچکےہیں، اے آر وائی نیوز کی نشریات کی بحالی کے حکم پر عملدرآمد کی رپورٹ پیش کی جائے۔

بعد ازاں اے آر وائی نیوز کے وکیل بیرسٹرایان میمن نے خصوصی گفتگو میں سماعت کا احوال بتایا کہ چیئرمین پیمراکورٹ میں پیش ہوئے، پیمرا نے کہا کہ کیبل آپریٹرز کو بندش کے احکامات نہیں دیے۔

بیرسٹرایان میمن کا کہنا تھا کہ عدالت نے چیئرمین پیمراسے کافی سوالات کیے، عدالت نے حکم دیا چیئرمین پیمرآج ایک سرکلر جاری کریں گے اور سرکلر آج عدالتی رجسٹرارکے پاس جمع کیا جائے گا۔

اے آر وائی نیوز کے وکیل نے کہا کہ عدالت نےکہاعدالتی حکم کی خلاف ورزی پر پھر توہین عدالت کی درخواست دی جاسکتی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ سرکلر میں واضح کیا جائے کہ پیمرا نے اے آر وائی بندش کے احکامات نہیں دئیے اور سرکلرمیں واضح ہوگا کہ اے آر وائی نیوز کی نشریات پرکوئی قدغن نہیں کیونکہ چیئرمین پیمرا نے کہا کیبل آپریٹرچینل بحال کریں گے تو ہمیں اعتراض نہیں۔

یاد رہے گذشتہ ہفتے جمعہ کو سندھ ہائی کورٹ نے اے آر وائی نیوزکی نشریات فوری بحال کرنے کا حکم دیا تھا تاہم اب تک نشریات بحال نہ ہوسکی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں