The news is by your side.

Advertisement

مودی حکومت کا آسام سے کشمیر تک مسلمانوں کے خاتمے کا ارادہ، ماہرین نے خبردار کردیا

اسلام آباد : شہریارآفریدی کا کہنا تھا کہ انسانی حقوق کے ماہرین نے دنیا کو بھارتی پلان سے متعلق متنبہ کیا ہےکہ مودی حکومت کاآسام سے کشمیر تک مسلمانوں کے خاتمے کا ارادہ ہے، یواین ایکشن لے تاکہ قیمتی انسانی جانیں بچائی جاسکیں۔

تفصیلات کے مطابق پارلیمانی کشمیر کمیٹی کے چیئرمین شہریار خان آفریدی نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر عالمی ماہرین کی جانب سے ہندوستان میں20کروڑ مسلمانوں کی’’نسل کشی‘‘کے خطرے کے اظہار پر اپنے بیان میں کہا کہ انسانی حقوق کےماہرین نےدنیاکوبھارتی پلان سےمتعلق متنبہ کردیا، آرایس ایس کی زیرقیادت مودی حکومت نےمسلم نسل کشی کاپلان دے دیا، شیطانی پلان کے مطابق 10 اقدامات کے تحت نسل کشی کی جائے گی۔

شہریارآفریدی کا کہنا تھا کہ ماہرین کا کہنا ہے مودی حکومت کاآسام سے کشمیرتک مسلمانوں کےخاتمےکاارادہ ہے، یواین ایکشن لے تاکہ قیمتی انسانی جانیں بچائی جاسکیں۔

یاد رہے عالمی ماہرین نے ہندوستان میں20کروڑ مسلمانوں کی’’نسل کشی‘‘کے خطرے کا اظہار کرتے ہوئے کہا تھا کہ بھارت میں انسانیت کیخلاف منظم جرائم جاری ہیں، بابری مسجد گرانا، مندر تعمیر کرنا اسی سلسلےکی کڑی ہے۔

اہرانسانی حقوق ٹینارمریز نے کہا کہ مسلمانوں پرظلم معاشی صورتحال کوبدترکررہی ہے، ہندوستان میں صورتحال اب بھی سنگین ہے اور ہندوستانی مسلمان مستقل خوف،عدم تحفظ کا شکارہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں