The news is by your side.

Advertisement

وقت آیا تو فضل الرحمان کو بھی عمران کے ساتھ لے آؤں گا، شیخ رشید

کراچی: عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید احمد نے کہا ہے کہ عمران خان اور جہانگیر ترین کے بغیر اسمبلی نہیں چل سکتی اگر ان دونوں افراد کو نااہل قرار دیا گیا تو میرا نام نواز شریف رکھ دینا،وقت آیا تو فضل الرحمان کو بھی عمران کے ساتھ لے آؤں گا۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے نشتر پارک میں منعقدہ تحریک انصاف کے جلسے ’’پاکستان زندہ باد‘‘ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ شیخ رشید کا کہنا تھا کہ کل اسمبلی میں ایاز صادق کو پورس کے ہاتھی کا لقب دیا ہے کیونکہ وہ جانب دار ہیں۔

اُن کا کہنا تھا کہ ’’نواز شریف نے خطاب کے دوران 4 سے 5 بار کہا میں آئندہ اسمبلی کا حصہ نہیں ہوں گا، میں آج کہتا ہوں کہ اگلی اسمبلی میں آپ نہیں ہوں گے تاہم میں یہ بھی کہتا ہوں کہ اگر عمران خان اور جہانگیر ترین کو نااہل قرار دیا گیا تو اسمبلی نہیں چل سکتی‘‘۔

پڑھیں: تحریک انصاف کا نشتر پارک کے اطراف سے کنٹینر ہٹانے کامطالبہ

شیخ رشید نے کہا کہ ’’اگر وقت آیا تو حکومت کے سب سے بڑی اتحادی مولانا فضل الرحمان کو بھی عمران خان کے پیچھے کھڑا کردوں گا کیونکہ یہ پاکستان کا معاملہ ہے‘‘۔ انہوں نے تمام مکاتب فکر کے علما سے اپیل کی کہ اختلافات بھلا کر ملکی سالمیت کے لیے باہر نکلیں اور پاکستان کو بچائیں۔

مزید پڑھیں: نشتر پارک خالی دیکھ کر پی ٹی آئی کھمبا نوچ رہی ہے، بلاول ہاؤس

سربراہ عوامی مسلم لیگ نے کہاکہ جو انگریزوں کے غلام تھے آج وہ ملک پر قابض ہیں تاہم ملک کے لیے قربانیاں دینے اور  گردنیں کٹوانے والوں کے بچوں کے لیے کلرک کی نوکریاں دی جاتی ہیں۔ شیخ رشید کا کہنا تھا کہ ’’جو لوگ کانگریس کے ساتھ تھے آج وہ حکمرانوں کے ساتھ ہیں اور جتنے لوگ پاکستان کے دشمن اور مخالف تھے آج وہ حکمرانوں کے ساتھ ہیں‘‘۔

یوم دفاع پاکستان کے حوالے سے شیخ رشید نے کہا کہ ’’پاک فوج کے جوانوں کو اُن کی قربانیوں پر سلام پیش کرتا ہوں۔ کراچی پر تبصرہ کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ ’’کراچی جاگتا ہے تو پاکستان جاگتا ہے کیونکہ یہاں کی سیاست ملک سے 10 سال آگے ہے‘‘۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں