آئی ایم ایف کے پاس جانے سے کوئی قیامت نہیں آجائے گی، شیخ رشید
The news is by your side.

Advertisement

آئی ایم ایف کے پاس جانے سے کوئی قیامت نہیں آجائے گی، شیخ رشید

شریف خاندان پڑوسی ممالک کے ذریعے این آر او کی کوشش کررہا ہے مگر اب کسی کو کوئی ریلیف نہیں ملے گا

کراچی: عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید احمد نے کہا ہے کہ 70سال میں اتنا قرضہ نہیں لیاگیاجتنا گزشتہ حکومت نے چار سال میں لیا، آئی ایم ایف کے پاس جانے سے کوئی قیامت نہیں آجائے گی، عمران خان نوجوانوں‌ کو 25 لاکھ نوکریاں فراہم کریں گے۔

اے آر وائی کے پروگرام ’اعتراض ہے‘ میں میزبان عادل عباسی کے ہمراہ لال حویلی سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے  شیخ رشید احمد کا کہنا تھا کہ زندگی میں تیسری باراپناٹارگٹ حاصل کیا، میں نےکہاتھا نوازشریف جیل میں ہوں گے اور عمران خان الیکشن میں 100 سے زائد قومی اسمبلی کی نشستیں لیں گے ، قوم نے تحریک انصاف کے چیئرمین پر اعتماد کیا۔

اُن کا کہنا تھا کہ ہمارےپاس فیل ہونےکی گنجائش نہیں ہے، ہم 20سے25لاکھ نوجوانوں نوکریاں دے دیں تو عوام یاد رکھیں گے، عمران خان درست فیصلےکررہےہیں، نئی حکومت سب سے پہلے پاکستان میں میرٹ اور صحت کے نظام کو بہتر بنائے گی، ہم محنت کریں گے اور اس ملک کو کچھ دے کر جائیں گے۔

شیخ رشید احمد کا کہنا تھا کہا تحریک انصاف کےپاس ناکامی کی گنجائش نہیں اور میری بھی پوری کوشش ہے کہ عمران خان کی حکومت کامیاب ہو، نئی حکومت الیکشن میں ہونے والی مبینہ دھاندلی پر کمیشن بنانے کے لیے تیار ہے۔

عوامی مسلم لیگ کے سربراہ کا کہنا تھا کہ سمندر پار پاکستانیوں نے عمران خان پر بھروسہ کیا اور وہی ملک کو کھڑا کر کے دکھائیں گے، تحریک انصاف کو تین سے چار ماہ چیلنجز ملیں گے جس کے بعد وہ آسانی کے ساتھ ملک کے معاملات چلا سکے گی۔

اُن کا کہنا تھا کہ شہبازشریف جیل کامٹیریل ہے، عنقریب سابق وزیر اعلیٰ پنجاب، شاہدخاقان،سعدرفیق جیلوں میں ہوں گے اور اُن کے خلاف احدچیمہ ، فوادحسن فوادسلطانی گواہ بنیں گے۔

شیخ رشید نے دعویٰ کیا کہ شریف خاندان پڑوسی ممالک کے ذریعے این آر او کی کوشش کررہا ہے مگر اب کسی کو کوئی ریلیف نہیں ملے گا، جن لوگوں نے ملک یا قومی خزانے کو نقصان پہنچایا اُن کا احتساب ہر صورت ہوگا۔

اُن کا کہنا تھا کہ شہبازشریف وکٹ کےدونوں طرف کھیل رہےہیں، یہ بزدل کاروباری جیل نہیں کاٹ سکتے اس لیے درمیانی راستے کی تلاش کے لیے سر توڑ کوششیں جاری ہیں۔  شیخ رشید احمد کا کہنا تھا کہ پنجاب میں مسلم ن لیگ کی حکومت بن ہی نہیں سکتی کیونکہ ابھی فاروڈ بلاک بھی سامنے آئے گا۔

عوامی مسلم لیگ کے سربراہ کا کہنا تھا کہ عمران خان کو پنجاب میں کرپٹ بیورو کریسی ملی ہے جس سے نجات حاصل کرنے کے لیے صوبائی وزارتوں کے ساتھ ماہرین کو بھی لگایا جائے گا۔

شیخ رشید احمد کا مزید کہنا تھا کہ  پچھلے چار سال میں حکومت نے قرضے لینے کا ریکارڈ بنایا، پاکستان کو قرضوں کی ادائیگی کا اہتمام کرنا ہوگا، ہمیں سب سے بات کرنی ہوگی اور اگر اپنی شرائط پر آئی ایم ایف کے پاس جائیں تو قیامت نہیں آجائے گی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں