The news is by your side.

Advertisement

آئندہ الیکشن ’’گو نواز گو‘‘ نعرے کے ساتھ لڑیں گے، شیخ رشید

اسلام آباد : عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید نے کہا ہے کہ پاناما کیس کا فیصلہ ایک ہفتے میں آجائے گا اور اسے سب کو ماننا بھی پڑے گا جو اکڑے گا وہ مار کھائے گا اور آئند الیکشن ’’گو نواز گو‘‘ کے ساتھ لڑیں گے۔

وہ اے آر وائی نیوز کے پروگرام ’’ دی رپورٹرز‘‘ میں گفتگو کر رہے تھے انہوں نے کہا کہ پاناما کیس کا فیصلہ ہمارے خلاف بھی آیا تو ہم تسلیم کریں گے۔


شیخ رشید نے کہا کہ آئندہ الیکشن کوئی عام الیکشن نہیں ہوں گے قذافی اسٹیڈیم میں گو نواز گو ہوا اور اگلا الیکشن اسی بنیاد پر لڑیں گے اور پاکستان نے کرپٹ سیاست دانوں کو آوٹ کردیں گے۔

انہوں نے کہا کہ سعدرفیق، عابدشیرعلی اور راناثناء اللہ جیسےلوگ ملک نہیں چلا سکتے اس لیئے اب جو کچھ ہوگا وہ 2017 میں ہی ہوگا اور 2018 تک نوبت نہیں آئے گی۔

ایک سوال کے جواب میں شیخ رشید نے کہا کہ لوگ ذہنی طور پر ماننےکو تیار نہیں کہ لندن کے فلیٹ قطری شہزادے کی ملکیت تھے اور انہوں نے بہ طور سیٹلمنٹ شریف خاندان کو دیئے تھے یہ جھوٹ زیادہ اثر نہیں چلے گا اور ان کے پاس اب بچت کا کوئی راستہ نہیں رہا ہے۔

پیپلز پارٹی کے حوالے سے پوچھے گئے سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ آصف زرداری کو چاہیئے کہ بلاول بھٹو کو مکمل اختیار اور فری ہینڈ دے دیں اس سے ان کی پارٹی مضبوط ہو گی اور عوام میں مقبولیت حاصل کرسکے گی۔

سربراہ عوامی مسلم لیگ کا کہنا تھا کہ موجودہ سسٹم میں اتنی طاقت نہیں کہ جمہوری ڈکٹیٹر شپ سے ملک کو نجات دے سکے اس لیے ایسے بوسیدہ نظام کئ خلاف عوام کو اٹھ کھڑا ہونا ہوگا تاکہ نئی صاف ستھری قیادت آ سکے۔

شیخ رشید نے راناثناءاللہ کے بیان پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ شہباز شریف نے راناثناءاللہ کو مارکیٹنگ کے لیے رکھ رکھا ہے ایسی سستی شہرت کا حصول وہی لوگ چاہتے ہیں جن کی جڑیں عوام میں نہیں اور جن کی کارکردگی صفر ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں