The news is by your side.

Advertisement

کچے میں آپریشن ، وزیر داخلہ شیخ رشید کی وزیراعلیٰ سندھ کو ہر ممکن تعاون کی یقین دہانی

کراچی : وزیر داخلہ شیخ رشید نے وزیراعلیٰ سندھ سے ملاقات میں کہا امن و امان سندھ حکومت کی ذمہ داری ہے، سندھ حکومت کو چاہئے ہم مدد کرنے کے لئے تیار ہیں۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیرداخلہ شیخ رشید کی وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ سے ملاقات ہوئی ، ملاقات میں آئی جی سندھ ، چیف سیکریٹری، وفاقی سیکریٹری داخلہ یوسف نسیم موجود تھے۔

ملاقات میں شکارپور میں ڈاکوؤں کی حالیہ کارروائیوں پر تبادلہ خیال کیا گیا ، وزیراعلیٰ سندھ مرادعلی شاہ نے کہا کہ پاکستان خطرناک ممالک کی فہرست میں چھٹے نمبرپرتھااب126پرہے، پہلے سندھ میں لوگ قافلے کی شکل میں سفرکرتےتھے، 2007میں پی پی حکومت نے گرینڈ آپریشن کرکے ہائی ویزکلیئر کرایا۔

مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ کراچی میں بھی امن و امان اتنا خراب تھا کہ نو گو ایریا بن گئے تھے، پوراسندھ گڈوسےکوٹڑی بیراج تک کچا ایریا ہے،صرف 6کلومیٹرز  جنگل ہے، کشمور بارڈرپنجاب،بلوچستان ،سندھ کےبارڈرزکوملاتاہے۔

انھوں نے بتایا کہ 23مئی کو پولیس نے 8 مغویوں کو شکارپور کے کچے سے بازیاب کرایا، اے پی سیز خراب ہونےکے باعث ڈاکوؤں نے حملہ کیا، 2اہلکار شہید ہوئے۔

وزیراعلیٰ سندھ نے شیخ رشید سے مکالمے میں کہا آپ وزیر داخلہ ہیں، آپ جب بھی چاہیں آجائیں، ہم مل کر کام کریں گے، آپ کو سندھ میں ویلکم کرتے ہیں۔

وزیرداخلہ شیخ رشید نے کہا کسی بھی چیز کی ضرورت پڑے وزارت داخلہ مہیا کرےگی، رینجرز حاضر ہے جب چاہےسندھ حکومت آپریشن میں خدمات لے سکتی ہے۔

مرادعلی شاہ کا کہنا تھا کہ کچھ حساس سازوسامان کابندوبست سندھ حکومت کررہی ہے، ان سازوسامان کےحصول میں وزارت داخلہ مدد کرے، ہم جلد کچے کے ایریا سے ڈاکوؤں کا صفایا کردیں گے۔

شیخ رشید نے کہا امن و امان سندھ حکومت کی ذمہ داری ہے، سندھ حکومت کو چاہئے ہم مدد کرنے کے لئے تیار ہیں، ڈاکوؤں کے خلاف دہشت گردی کے کیسز درج کرائے جائیں‌۔

Comments

یہ بھی پڑھیں