The news is by your side.

Advertisement

کرپٹ سرکاری افسر کو گولی ماردو لیکن قتل نہ کرنا

منیلا : فلپائن کے صدر روڈریگو ڈوٹیرٹے نے عوام کو اجازت دی ہے کہ وہ ایسے سرکاری ملازمین کو جو رشوت لیتے ہوں اور کرپشن میں ملوث ہوں انہیں گولی مار دیں لیکن قتل نہ کریں وہ صرف زخمی ہوں۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق فلپائن کے صدر روڈریگو ڈوٹیرٹے نے ملک سے کرپشن و رشوت کے خاتمے کےلیے انتہائی قدم اٹھاتے ہوئے عوام سے کہا ہے کہ احتیاط سے کام لیتے ہوئے راشی اور بدعنوان افسر کو گولی مار کر زخمی کردیں۔

ان کا کہنا تھاکہ اگر آپ کی گولی سے مذکورہ افسر ہلاک ہوگیا تو ملک کے قوانین مجھے اس بات کی اجازت نہیں دیتے کہ میں قتل کرنے والے کو معاف کر دوں۔

انہوں نے کہا کہ ٹیکس، فیس کی ادائیگی کے معاملے میں یا کوئی سرٹیفکیٹ یا دستاویز بنوانے کے لیے اگر کوئی سرکاری ملازم آپ سے رشوت طلب کرے تو ہتھیار ہونے کی صورت میں آپ اسے گولی مار سکتے ہیں۔

سخت گیر فلپائنی صدر نے عوام سے وعدہ کیا کہ اس اقدام پر عوام کو جیل نہیں جانے دیں گے لیکن گولی مارنے کے جرم میں آپ کو جسمانی سزا ضرور دی جائے گی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں