The news is by your side.

Advertisement

سندھ بھر میں میٹرک کے سالانہ امتحانات آج سے شروع

کراچی: سندھ بھر میں میٹرک کے امتحانات آج سے شروع ہو رہے ہیں، صوبہ بھر میں 1312 امتحانی مراکز قائم کر دیے گئے، ادھر کراچی بورڈ نے ایک ہزار سے زائد طلبہ کا مستقبل داؤ پر لگا دیا ہے، طلبہ کو غلط رول نمبر سیریز جاری کر دی گئی۔

تفصیلات کے مطابق کراچی سکھر سمیت سندھ بھر میں آج سے نویں دسویں کے امتحانات کا آغاز ہو رہا ہے، 7 لاکھ 26 ہزار 979 طلبہ و طالبات امتحان میں شرکت کریں گے، امتحانات 17 مئی سے 25 مئی تک جاری رہیں گے۔

طلبہ اور اساتذہ کو موبائل فون ساتھ لانے کی اجازت نہیں ہوگی، تعلیمی بورڈز کے چیئرمینز کے اجلاس میں نقل کی روک تھام کے لیے امتحانی مراکز کے اندر اور باہر سخت سیکیورٹی کا فیصلہ کیا گیا ہے، 112 ویجیلنس ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں۔

کراچی بورڈ نے ایک ہزار سے زائد طلبہ کا مستقبل داؤ پر لگا دیا ہے، طلبہ کو غلط رول نمبر سیریز جاری کر دی گئی ہے، بورڈ آفس میں رات گئے تک والدین، طلبہ اور اسکول نمائندگان کا رش لگا رہا۔

چیئرمین میٹرک بورڈ کراچی شرف علی شاہ کا کہنا ہے کہ اس سال تین لاکھ 65 ہزار طلبہ امتحانات دیں گے، امتحانی مراکز کی تعداد 448 ہے، انھوں نے بتایا کہ میٹرک بورڈ آفس سے امتحانی مراکز پر پرچے منتقل کیے جا رہے ہیں۔

سکھر سیکریٹری بورڈ رفیق پلھ کا کہنا ہے کہ رواں برس 90 ہزار 459 سے زائد طلبہ و طالبات امتحانات دیں گے، خیرپور اور گھوٹکی میں 187 امتحانی مراکز قائم کر دیے گئے ہیں۔ سیکریٹری بورڈ نے بتایا کہ امتحانی مراکز میں سے 49 طلبہ اور 36 طالبات کے لیے مختص ہوں گے، نقل روکنے کے لیے بھی 27 سے زائد چھاپا مار ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں۔

سیکریٹری بورڈ کے مطابق امتحانات کے دوران دفعہ 144 کے نفاذ کے لیے وزارت داخلہ سے سفارش کی گئی ہے، اور امتحانی مراکز میں غیر متعلقہ افراد کے داخلے پر پابندی ہوگی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں