سندھ کابینہ کا اجلاس، اے ڈی خواجہ کو ہٹانے کی منظوری ad khawaja Sindh cabinet meeting
The news is by your side.

Advertisement

سندھ کابینہ کا اجلاس، اے ڈی خواجہ کو ہٹانے کی منظوری

کراچی: آئی جی سندھ کے معاملے پر وفاق اور سندھ حکومت کا تنازع مزید شدت اختیار کرگیا، سندھ کابینہ نے اے ڈی خواجہ کو برطرف کرکے سردار عبدالمجید دستی کو ایک بار پھر آئی جی سندھ بنانے کی منظوری دے دی۔

تفصیلات کے مطابق سندھ کابینہ کا اجلاس وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کی زیر صدارت وزیر اعلیٰ ہاؤس میں منعقد ہوا۔ اجلاس میں اے ڈی خواجہ کو آئی جی سندھ پولیس کے عہدے سے ہٹانے کے معاملے پر اتفاق رائے پایا گیا۔

کابینہ نے فیصلہ کیا کہ اے ڈی خواجہ کی خدمات وفاق کے سپرد کردی جائیں او ر ان کی جگہ سردار عبدالمجید دستی کو آئی جی سندھ پولیس تعینات کردیا جائے۔

دوسری جانب اے ڈی خواجہ نے عہدہ چھوڑنے سے انکار کردیا، اے آر وائی نیوز سے بات کرتے ہوئے اے ڈی خواجہ نے کہا کہ میرے عہدے پر رہنے یا نہ رہنے کا معاملہ عدالت میں ہے، میں کسی صورت استعفی نہیں دوں گا،عدالت جو بھی فیصلہ کرے گی قبول ہوگا۔

واضح رہے چند روز قبل سندھ حکومت نے آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ کی خدمات وفاق کے حوالے کردی تھیں اور ان کی جگہ اے آئی جی سندھ عبدالمجید دستی کو عارضی طور پر نیا آئی جی سندھ مقرر کردیا تھا۔


قائم مقام آئی جی سندھ کا نوٹی فکیشن معطل‘ عدالت کی اے ڈی خواجہ کو کام جاری رکھنے کی ہدایت


سندھ ہائی کورٹ نے فیصلے کو کالعدم قرار دیتے ہوئے اے ڈی خواجہ کو بدستور آئی جی سندھ کے عہدے پر کام کرنے کا حکم دیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں