The news is by your side.

Advertisement

رمضان المبارک ، سندھ حکومت کا بڑی پابندی عائد کرنے کا فیصلہ

کراچی : کورونا وائرس کی روک تھام کیلئے سندھ حکومت نے رمضان المبارک میں سرکاری افطار پارٹیوں اور عوامی دستر خوانوں پر پابندی عائد کرنے کا فیصلہ کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق سندھ حکومت نے سرکاری افطار پارٹیوں پر پابندی عائد کرنے کا فیصلہ کرلیا ، فیصلہ کورونا وائرس کی روک تھام کےلئے کیا گیا ہے جبکہ سیاسی، سماجی و مذہبی جماعتوں کو بھی افطار پارٹی نہ کرنے پر زور دیا جائے گا۔

ذرائع سندھ حکومت کا کہنا تھا کہ ماہ رمضان کے دوران عوامی دستر خوانوں پر بھی پابندی ہوگی، عوامی مقامات پرراشن یا افطار کیلئے لوگوں کوجمع کرنے کی اجازت نہیں ہوگی۔

خیال رہے سندھ میں کورونا کےمریضوں کی تعداد 3671 تک جا پہنچی ہے جبکہ جاں بحق افرادکی تعداد 73 ہوگئی جوکل مریضوں کا 1.98فیصد ہے۔

یاد رہے کراچی کے سینئر ڈاکٹرز نے حکومت سے مطالبہ کیا تھا کہ لاک ڈاؤن کے نام پر مذاق بند کیا جائے اور اس پر مکمل عمل درآمد کیا جائے کیونکہ ہمارے پاس اسپتالوں میں جگہ موجود نہیں ہے۔

اُن کا کہنا تھا کہ حکمرانوں سے پہلے بھی کئی مہلک بیماریاں نہیں سنبھالی گئیں، 14اپریل سے لاک ڈاؤن میں نرمی آتے ہی مریضوں میں اضافہ ہوگیا، عوام سمیت تمام مکاتب فکر کو وبا پر کنٹرول کرنے کے لیے اپنا تعاون پیش کرنا ہوگا۔

ماہرین نے کہا کہ آئندہ 2 یا 4 ہفتےمیں وائرس شدت اختیار کرے گا، وبا سے لڑنےکی دوا کسی بھی ملک کے پاس موجود نہیں، بچاؤ کیلئے احتیاط ہی واحد راستہ ہے۔

واضح رہے پاکستان میں کورونا کے مریضوں کی تعداد 10 ہزار سے تجاوز کر چکی ہے جبکہ 24 گھنٹوں میں 15 افراد کی موت ہوئی، جس کے بعد پاکستان میں جاں بحق افراد کی تعداد 224 ہوگئی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں