The news is by your side.

Advertisement

سندھ حکومت کا لاک ڈاؤن میں آج مزید سختی کرنے کا فیصلہ

کراچی : سندھ حکومت کی جانب سے لاک ڈاؤن میں آج مزید سختی کرنے کا فیصلہ کرلیا، جس کے بعد لوگوں کو گھروں تک محدود کرنے کیلئے علاقائی پولیس متحرک ہیں۔

تفصیلات کے مطابق سندھ حکومت کی جانب سے لاک ڈاؤن میں آج مزید سختی کرنے کا فیصلہ کرتے ہوئے شب برأت کے حوالے سے لوگوں کو گھروں تک محدود رکھنےکی حکمت عملی تیار کرلی ہے۔

اس حوالے سے مختلف علاقوں میں سڑکوں کی ناکہ بندی کرکے چیکنگ میں مزید اضافہ کردیا گیا ہے اور لوگوں کو گھروں تک محدود کرنے کیلئے علاقائی پولیس متحرک ہیں۔

قانون نافذ کرنے والے اداروں کی جانب سے شہر میں گشت بڑھا دیا گیا ہے ، سندھ حکومت نے عوام سے اپیل کی ہے کہ گھروں میں رہ کر عبادت کریں قبرستانوں کارخ نہ کریں ، جوشہری قبرستان کی طرف آئے گا، اسے جانے نہیں دیا جائے گا۔

ترجمان سندھ حکومت نے کہا کہ لاک ڈاؤن کی خلاف ورزی کرنےوالوں کےخلاف کارروائی ہوگی ، یہ سب شہریوں کی اپنی حفاظت کیلئے کیا جارہا ہے۔

دوسری جانب کراچی میں پولیس نے شب برات پردفعہ 144 کی خلاف ورزی پر ایکشن کا فیصلہ کیا ہے اور شب برات پرعوام کوگھروں میں روکنے کا پلان تیار کرتے ہوئے کہا کسی کوقبرستان آنےکی اجازت نہیں، اس حوالے سے پولیس نے تمام یونٹس کوآگاہ کردیا ہے۔

گزشتہ روز وزیراعلیٰ ہاؤس میں کابینہ ارکان کا مشاورتی اجلاس ہوا تھا ، جس میں وزیراعلیٰ سندھ مرادعلی شاہ نے سڑکوں اوردکانوں پررش پراظہاربرہمی کرتے ہوئے قانون نافذکرنےوالےاداروں کولاک ڈاؤن پرعملدرآمدکرانےکی ہدایت کی تھی۔

حکومت سندھ نے لاک ڈاؤن مزیدسخت کرنےکافیصلہ کرتے ہوئے حکام کو ہدایت کی ابتدائی 7روزوالالاک ڈاؤن چاہیے، بلاضرورت کسی کوکہیں جانےکی اجازت نہ دی جائے۔

وزیراعلیٰ سندھ کا کہنا تھا کہ کوروناوائرس کےاعداوشمارتشویشناک ہیں، عوام سےاپیل کرتاہوں کہ گھروں پررہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں