The news is by your side.

Advertisement

حکومت سندھ کا آئی جی کی خدمات وفاق کےسپرد کرنے کا فیصلہ

کراچی: سندھ حکومت نےآئی جی سندھ اے ڈی خواجہ کی خدمات وفاق کے سپرد کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے،صوبائی حکومت نے وفاقی حکومت کو خط لکھ دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق سندھ حکومت نےآئی جی سندھ اے ڈی خواجہ کی خدمات وفاق کےسپرد کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے۔اس سلسلے میں سندھ حکومت نےوفاقی حکومت کوخط لکھ دیا ہے۔

سندھ حکومت نےخط میں اے ڈی خواجہ کی خدمات وفاق کےسپرد کرنے کی درخواست کی ہے،جبکہ نئے آئی جی سندھ کےلیے3 ناموں کی سمری بھی وفاق کوارسال کی ہے،جس میں سردار عبدالمجید دستی،غلام قادرتھیبو اورخادم حسین بھٹی کےنام تجویز کیے ہیں۔

latter

خیال رہے کہ سردارعبدالمجیدد ستی اےآئی جی ریسرچ اورڈیولپمنٹ کےعہدے پرتعینات ہیں،غلام قادر تھیبو چیئرمین اینٹی کرپشن کےعہدے پرتعینات ہیں۔

خادم حسین بھٹی ایڈیشنل آئی جی ٹریفک کےعہدےپرتعینات ہیں،ذرائع کا کہنا ہےکہ آئی جی سندھ کےلیےمضبوط انتخاب غلام قادر تھیبو کا ہے۔

آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ جبری رخصت

یاد رہے گذشتہ سال دسمبر میں آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ کےحوالے سے جبری رخصت کی خبر میڈیا کی زینت تھی.

آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ نے دوبارہ تعینات

رواں سال آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ نے دوبارہ اپنا عہدہ سنبھال لیا تھا، اُن کی غیر موجودگی میں کراچی پولیس چیف مشتاق مہر کو قائم مقام انسپکٹر جنرل تعینات تھے.

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں