The news is by your side.

Advertisement

ملک کی تعمیر و ترقی جمہوری عمل سے منسلک ہے، ڈاکٹرمحمد علی شیخ

کراچی : سندھ مدرسہ یونیورسٹی کے وائس چانسلر ڈاکٹر محمد علی شیخ نے کہا ہے کہ اصولی طور پر جمہوریت اور الیکشن ایک دوسرے سے منسلک چیزیں ہیں، ہمارے ملک کی ترقی و تعمیر جمہوری عمل سے منسلک ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے سندھ مدرستہ الاسلام یونیورسٹی میں میں جاری آرٹ اینڈ آئیڈیاز فیسٹیول میں لیکچر پروگرام میں ’’جمہوریت اور انتخابات‘‘ کے موضوع پر لیکچر دیتے ہوئے کیا۔

انہوں نے کہا کہ الیکشن کے ذریعے ہی عوام اپنے نمائندوں کو منتخب کرتے ہیں لیکن ہمارے یہاں آبائی نشستیں رکھنے والے لوگ بھی موجود ہیں، اس لئے عام طور پر لوگ اپنے حقیقی نمائندوں کا انتحاب کرنے میں کامیاب نہیں ہوتے،انہوں نے مزید کہا کہ ہمارے ملک کی ترقی و تعمیر جمہوری عمل سے منسلک ہے۔

اس موقع پر دیگر مقررین کا کہنا تھا کہ عام انتخابات میں ووٹ ڈالنے کی شرح میں جب تک اضافہ نہیں ہوتا تب تک ملک میں تبدیلی ممکن نہیں،اس کے بغیر جتنی بھی الیکشن اصلاحات کی جائیں بے سود ثابت ہونگی۔

مقررین کا کہنا تھا کہ تبدیلی کے لیئے ضروری ہے کہ انتخابات میں ووٹ کی شرح کو کم ازکم 60 فیصد تک بڑھایا جائے اس لیے عوام بالخصوص نوجوانوں کو چاہییے کہ عام انتخابات میں بڑھ چڑھ کر ووٹ کا حق استعمال کریں۔

ماحولیاتی مسائل سے متعلق سیشن میں گفتگو کرتے ہوئے ماحولیات کے ماہرین نے کہا کہ حکومت کو یہ طے کرنا ہوگا کہ ملک کے لیے ان کے نزدیک معیشیت زیادہ اہم ہے یا ملک کے لیے ماحولیاتی آلودگی کا مسئلہ زیادہ اہمیت کا حامل ہے۔

ماحولیاتی آلودگی ملک کا انتہائی سنگین نوعیت کا مسئلہ ہے جسے حکومت کی اولین ترجیح ہونا چاہیئے، کوئلے پر چلنے والے بجلی گھر ملکی معیشیت کو بہتر بنانے میں مددگار ہونگے لیکن وہ ماحول کیے لیئے تباہ کن ثابت ہوں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں