site
stats
پاکستان

پولیس کی کالی بھیڑیں بے نقاب، تاجر سے 56 لاکھ روپے اور گاڑی لے کر فرار

کراچی: ایسٹ زون میں پولیس اہلکار مبینہ طور پر اغوا برائے تاوان میں ملوث نکلے اور انہوں نے تاجر سے 56 لاکھ روپے اور گاڑی  چھین لی۔

تفصیلات کے مطابق ایک بار پھر سندھ پولیس میں کالی بھیڑیں سامنے آئیں، تاجر نے پولیس اہلکاروں پر الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ 11 تاریخ کو پولیس اہلکاروں نے حراست میں لے کر گاڑی میں بٹھایا اور آنکھوں پر پٹی باندھ کر نامعلوم مقام پر لے گئے۔

تاجر کا کہنا ہے کہ میرے پاس ایک بیگ موجود تھا جس میں تقریبا 56 لاکھ روپے سے زائد رقم تھی، پولیس اہلکاروں نے شارع فیصل پر میری گاڑی روکی اور آنکھوں پر پٹی باندھ کر سوا گھنٹے تک گاڑی چلاتے رہے۔

تاجر مقصود میمن نے کہا کہ پہلے تو مجھ پر تشدد کیا گیا تاہم اہلکاروں نے رات کو چار بجے اسٹار گیٹ کے قریب گاڑی سے اتارا اور بیک ہاتھ میں تھما کر  نئی گاڑی ساتھ لے گئے، بیگ کھول کر دیکھا تو اُس میں رقم کی جگہ کچرا موجود تھا۔

محافظوں کے ہاتھوں مبینہ طور پر لٹنے والے تاجر مقصود میمن دبئی میں الیکٹرانکس کا کام کرتے ہیں اور وہ منی ایکسچینج سے رقم لے کر واپس جارہے تھے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top