The news is by your side.

Advertisement

سلینا گومز کی گردوں کی پیوند کاری

معروف امریکی گلوکارہ سلینا گومز گردے کی پیوند کاری کے مرحلے سے گزریں اور اس موقع پر ان کی جس دوست نے ان کے لیے گردہ عطیہ کیا، اس کے ساتھ انہوں نے ایک خوبصورت تصویر سوشل میڈیا پر پوسٹ کی۔

اپنے مداحوں کو اپنی بیماری سے متعلق بتانے کے لیے انہوں نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ انسٹاگرام پر ایک تصویر پوسٹ کی جس میں وہ اور ان کی سہیلی اسپتال کے بستروں پر موجود ہیں۔

I’m very aware some of my fans had noticed I was laying low for part of the summer and questioning why I wasn’t promoting my new music, which I was extremely proud of. So I found out I needed to get a kidney transplant due to my Lupus and was recovering. It was what I needed to do for my overall health. I honestly look forward to sharing with you, soon my journey through these past several months as I have always wanted to do with you. Until then I want to publicly thank my family and incredible team of doctors for everything they have done for me prior to and post-surgery. And finally, there aren’t words to describe how I can possibly thank my beautiful friend Francia Raisa. She gave me the ultimate gift and sacrifice by donating her kidney to me. I am incredibly blessed. I love you so much sis. Lupus continues to be very misunderstood but progress is being made. For more information regarding Lupus please go to the Lupus Research Alliance website: www.lupusresearch.org/ -by grace through faith

A post shared by Selena Gomez (@selenagomez) on

اپنی پوسٹ میں انہوں نے لکھا کہ ’مجھ سے سوالات کیے جارہے تھے کہ میں سماجی تقریبات اور میوزک سے کیوں دور ہوں، کیا میں مغرور ہوگئی ہوں تو اب میں بتانا چاہتی ہوں کہ دراصل میں بیمار تھی اور اب تیزی سے رو بصحت ہوں‘۔

سلینا کے مطابق وہ لیوپس نامی بیماری کا شکار تھیں۔ یہ بیماری جسم کے خلیات کو متاثر کرتی ہے، نتیجے میں جسم کا کوئی بھی عضو بشمول جلد ناکارہ اور ناقابل تلافی نقصان کا شکار ہوسکتا ہے۔

اس بیماری سے نمٹنے کے لیے سلینا کو گردے کی ضرورت تھی اور ایسے وقت میں ان کی ایک بہترین دوست نے انہیں اپنا گردہ عطیہ کیا۔

سلینا نے اپنی دوست فرانسیا ریسا کی جانب سے اسے خوبصورت ترین تحفہ قرار دیتے ہوئے ان کا بے حد شکریہ بھی ادا کیا۔

اپنی پوسٹ میں سلینا نے اس بیماری کے بارے میں مزید جاننے اور آگاہی و شعور پھیلانے کی ضرورت پر بھی زور دیا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں