The news is by your side.

Advertisement

انڈونیشیا میں 6 سے 11 سالہ بچوں میں سائنوویک کے استعمال کی منظوری

جکارتہ: انڈونیشیا نے 6 سے 11 سال کی عمر کے بچوں کے لیے سائنوویک ویکسین کی اجازت دے دی۔

تفصیلات کے مطابق انڈونیشیا کی فوڈ اینڈ ڈرگ ایجنسی نے پیر کو کہا ہے کہ اس نے چھ سے گیارہ سال کی عمر کے بچوں کے لیے چینی کمپنی سائنوویک کی کرونا ویکسین کی منظوری دے دی ہے۔

پیر تک انڈونیشیا میں صرف 12 سال یا اس سے زیادہ عمر کے لوگوں کے لیے چینی ساختہ سائنوویک ویکسین کے استعمال کی اجازت تھی، انڈونیشیا کی کرونا مہم کے دوران استعمال کی جانے والی ویکسینز میں سب سے زیادہ تعداد سائنوویک ہی کی ہے، جو 20 کروڑ سے زیادہ ڈوزز پر مبنی ہے۔

انڈونیشی حکام کا کہنا ہے کہ بچوں کے لیے سائنوویک کے استعمال کی منظوری خوش آئند ہے، ہمیں یقین ہے کہ بچوں کی ویکسینیشن ایک فوری معاملہ ہے۔

ایک اور ملک میں‌ 5 سالہ بچوں کے لیے سائنوویک ویکسین کی منظوری

وزیر صحت بوڈی گناڈی صادقین کا کہنا تھا کہ یہ منظوری اس وقت ملی ہے جب انڈونیشیا کو ذاتی طور پر سیکھنے کی ٹرائلز میں دو ماہ ہونے کو ہیں، اور اس دوران اسکولوں میں سامنے آنے والے کیسز نسبتاً کم رہے ہیں۔

وزارت صحت کی ایک اہل کار ستی نادیہ ترمزی نے بتایا کہ بچوں کے لیے ویکسینیشن کا آغاز اگلے برس ہی ہوگا، کیوں کہ انڈونیشیا کی پیڈیاٹرک ایسوسی ایشن کی مزید سفارشات اور مزید ویکسین شاٹس کا انتظار کیا جا رہا ہے۔

واضح رہے کہ چلی اور کمبوڈیا نے بھی چھوٹے بچوں کے لیے سائنوویک کرونا ویکسین کے استعمال کی منظوری دی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں