site
stats
پاکستان

استعفیٰ دے کر ماحول پیدا کرنے میں ہی نوازشریف کی عزت ہے، سراج الحق

اسلام آباد : امیر جماعت اسلامی سراج الحق کا کہنا ہے کہ چھوٹے گریڈ کا افسر بڑے گریڈ کے افسر کیخلاف کیسے تحقیقات کرسکتا ہے، استعفیٰ دے کر ماحول پیدا کرنے میں ہی نوازشریف کی عزت ہے، نوازشریف کوکلین چٹ ملےتو دوبارہ وزیراعظم بن سکتے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ  20 اپریل پاکستان کا تاریخی دن ہے، ججز نے واضح کہا کہ یہ صادق اور امن نہیں رہے، پہلی بار سپریم کورٹ نے وزیراعظم کوغیر شفاف قرار دیا، ججز نے واضح کہا کہ نوازشریف ایماندار نہیں۔

سراج الحق نے کہا کہ اپوزیشن کا مطالبہ ہے شفاف تحقیقات کیلئے وزیراعظم استعفیٰ دیں ، عدات نے واضح کیا کہ وزیراعظم کی دستاویزات درست نہیں، فیصلہ یقینی طور پر منزل نہیں، کامیابی کی طرف پیش قدمی ہے، استعفیٰ دے کر ماحول پیدا کرنے میں ہی نوازشریف کی عزت ہے۔

انکا کہنا تھا کہ نوازشریف استعفیٰ دے کرآزادانہ تحقیقات کا موقع فراہم کریں، چھوٹے گریڈ کا افسر بڑے گریڈ کے افسرکیخلاف کیسے تحقیقات کرسکتا ہے، انصاف وعدل کا تقاضا ہے تحقیقات تک وزیراعظم کرسی چھوڑ دیں۔

امیر جماعت اسلامی نے کہا کہ سپریم کورٹ احتساب کیلئے میکنزم بناتی تو سب سے پہلے خود پیش ہوتا، کل عدالت نے وزیراعظم کو کلین چٹ نہیں دی، کلیئر نہیں کیا۔

سراج الحق نے مزید کہا کہ ملک کی کامیابی کا واحد راستہ ملکر کرپشن کے خلاف جدوجہد ہے، یہ نعرہ لگاتا رہوں گا کہ احتساب ہو اور سب کا ہو،سب سے پہلے میں احتساب کیلئے پیش ہوں اور پھرسب کا ہو۔


مزید پڑھیں : جے آئی ٹی دہشت گردوں سے تحقیقات کے لیے بنائی جاتی ہے، سراج الحق


گذشتہ روز پاناما کیس کے فیصلے کے بعد اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے جماعت اسلامی کے امیر کا کہنا تھا کہ جے آئی ٹی دہشت گردوں سے تحقیقات کے لیے بنائی جاتی ہے، سپریم کورٹ نے وزیراعظم کو کلین چٹ نہیں دی اس لیے وزیراعظم استعفیٰ دیں۔

سراج الحق کا کہنا تھا کہ عدالتی فیصلے سے ثابت ہوا کہ ملک میں کرپشن ہورہی ہے، نوازشریف کے وکلاء عدالت کو مطمئن نہیں کرسکے۔

 

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top