site
stats
پاکستان

برما کے سفیر کو ملک بدر کرنے کا مطالبہ کرتے ہیں، سراج الحق

لوئر دیر: امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے کہا ہے کہ آئین کے آرٹیکلز 62 اور 63 کا خاتمہ آئین پر خود کش حملہ ہوگا جس کی اجازت نہیں دی جائے گی.

وہ لوئر دیر میں اجتماع سے خطاب کر رہے تھے انہوں نے کہا کہ جماعت اسلامی کل ملک بھر نماز جمعہ کے اجتماعات کے بعد روہنگیا مسلمانوں پر ڈھائے جانے والے مظالم کے خلاف مظاہرے کرے گی جس میں بڑی تعداد میں شرکت کرکےعوام حکومت وقت اور عالمی برادری کو واضح پیغام دیں گے.

انہوں نے کہا کہ ہم اپنے مظلوم روہنگیائی مسلمانوں کے ساتھ دکھ پریشانی اور اذیت کے اس کڑے وقت میں شانہ بشانہ کھڑے ہیں اور روہنگیا کے مسلمانوں کو ظالم و جابر حکمرانوں سے نجات دلانے کے لیے اپنا کردار ادا کرتے رہیں گے اور سطح پر اس کے خلاف آواز اُٹھائیں گے.

امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے کہا کہ ہمارا مطالبہ ہے کہ حکومت ملی غیرت و حمیت کا مظاہرہ کرتے ہوئے برما کے سفیر کو ملک بدر کردے اگر حکومت ایسا کرنے میں کامیاب رہتی ہے تو ہم بھی اپنے احتجاج کی کال واپس لے لیں گے.

انہوں نے کہا کہ آئین کا تحفظ ملکی سلامتی وبقا کی ضمانت ہے جس کا ہم نے حلف اٹھا رکھا ہے اس لیے جماعت اسلامی آئین کی شق 63 اور 62 کے خاتمے کی اجازت نہیں دے گی اور حکومت کو اس معاملے پر سخت مزاحمت رہے گا.


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top