معاشرے کا اصل دفاع سیاست دان نہیں بلکہ دین کرتا ہے، سراج الحق siraj ul haq
The news is by your side.

Advertisement

معاشرے کا اصل دفاع سیاست دان نہیں بلکہ دین کرتا ہے، سراج الحق

لاہور : امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے کہا ہے کہ معاشرے کو سیاست دان یا اسلحہ نہیں بچا سکتے ہیں بلکہ معاشرے کا اصل دفاع دین اور مضبوط خاندانی نظام ہے.

امیرجماعت اسلامی لاہور میں اپنے مرکزی دفتر میں علماء و مشائخ کو دیئے گئے عشایئے سے خطاب کر رہے تھے انہوں نے کہا کہ مسئلہ الیکشن کی جیت کا نہیں اس امت کی بقا کا ہے.

سراج الحق نے کہا کہ امت مسلمہ اس وقت مشکل دور سے گزر رہی ہے اور استعماری اور طاغوتی قوتیں آپس میں متحد ہو کر امریکا کے زیر سایہ مسلمانوں پر حملہ آور ہو چکے ہیں.

انہوں نے کہا کہ دین کی کچھ قوتیں ایم ایم اے میں شامل ہوچکی ہیں کیوں کہ ظالم سرمایہ داروں کے مقابلے کے لیے متحد ہونا بہت ضروری ہے جس کو مد نظر رکھتے ہوئے ایم ایم کی بحالی کےعمل میں تیزی سے گامزن ہیں.

سراج الحق نے کہا کہ دین ی قوتیں امانتدار اور شفاف قیادت کے ذریعے ملک کے دریرنہ مسائل کو حل کرنے کی مکمل صلاحیت رکھتے ہیں جس سے حقیقی انقلاب برپا ہوگا.

انہوں نے مزید کہا کہ فلسطینیوں سے اظہار یکجہتی کے لیے 17 دسمبر کو کراچی میں ملین مارچ کیا جائے گا اور عوام کی بھرپور قوت بیت المقدس پر امریکی موقف کو تبدیل کرنے پر مجبور کردے گی.

امیر جماعت اسلامی کا کہنا تھا کہ او آئی سی ایشو بیت المقدس کے معاملے پر امریکا کا بائیکاٹ کرے اور اسلامی ممالک کے حکمرانوں کو بھی چاہیئے کہ امریکا سے اسلحہ خریدنا بند کر دیں جب عوام الناس امریکا کی تمام مصنوعات کا مکمل بائیکاٹ کریں.

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں