The news is by your side.

Advertisement

بیت المقدس کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرنا ہمارے ایمان کے لیے چیلنج ہے: سراج الحق

فلسطین کی صورت حال عالم اسلام کا امتحان ہے، سعودی عرب اور ایران آپس کے جھگڑے ختم کریں

لاہور: امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے کہا ہے کہ بیت المقدس کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرنا ہمارے ایمان کے لیے چیلنج ہے.

تفصیلات کے مطابق امیرجماعت اسلامی سراج الحق نے اسرائیلی مظالم کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ لاکھوں مسلمانوں کی قربانیوں سے بیت المقدس آزادہوا تھا.

ٹرمپ انسانی اوراخلاقی اقدار اورکسی قانون کاپابند نہیں، اوآئی سی ممالک مذمت کے بجائے عملی اقدامات کریں

سراج الحق امیر جماعت اسلامی

سراج الحق کا کہنا تھا کہ ہمارے وزیراعظم کواستنبول اجلاس میں 21 کروڑ عوام کی نمائندگی کرنی ہوگی، مسلم ممالک امریکا میں سفارت خانے بند کریں اور سفیروں کو واپس بلائیں.

سراج الحق کا کہنا تھا کہ فلسطین کی صورت حال عالم اسلام کا امتحان ہے، سعودی عرب اور ایران آپس کے جھگڑے ختم کرکے کافر کامقابلہ کریں.

امیر جماعت اسلامی کا کہنا تھا کہ عالم اسلام نے بیداری کا ثبوت دیا، تو اللہ کی برکت نصیب ہوگی، ٹرمپ انسانی اوراخلاقی اقدار اورکسی قانون کاپابند نہیں، اوآئی سی ممالک مذمت کے بجائے عملی اقدامات کریں.

سراج الحق کا کہنا تھا کہ لاہورکے عوام نے احتجاج کرکے اہل فلسطین کو یک جہتی کاپیغام دیا، اہل پاکستان کو کشمیریوں اور فلسطینیوں کے حق کے لیے ان کے ساتھ کھڑا ہونا ہے، فلسطینی اپنے گھروں میں دوبارہ جانے کا حق مانگ رہے ہیں.


عالمی برادری فلسطینیوں کے قتل عام کا نوٹس لے، سراج الحق


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں