site
stats
پاکستان

زینب توچلی گئی مگراس ظالمانہ نظام کیخلاف آوازبن گئی، سراج الحق

قصور : امیر جماعت اسلامی سراج الحق کا کہنا ہے کہ زینب توچلی گئی مگراس ظالمانہ نظام کیخلاف آواز بن گئی، زینب کیساتھ وہ سلوک ہوا جو جنگل کے درندے بھی نہیں کرتے ہونگے، زینب کے قاتل، فائرنگ کرنیوالے اہلکاروں کو بھی پھانسی دی جائے۔

تفصیلات کے مطابق امیر جماعت اسلامی سراج الحق قصور میں زینب کے گھر پہنچے اور بچی کے لواحقین سے تعزیت کا اظہار کیا ، اس موقع پر سراج الحق کا کہنا ہے کہ زینب کےوالدین عمرےکی ادائیگی کےلئےمدینےمیں موجودتھے، زینب کیساتھ وہ سلوک ہواجوجنگل کےدرندے بھی نہیں کرتے ہونگے۔

امیر جماعت اسلامی کا کہنا تھا کہ زینب کاخون ہم سےتقاضہ کرتاہےکہ ظالمانہ نظام کیخلاف باہرنکلیں، زینب توچلی گئی مگراس ظالمانہ نظام کیخلاف آوازبن گئی، پنجاب حکومت اور وزیراعظم سے پوچھتا ہوں آپ کا ضمیرکیوں نہیں جاگا۔

امیر جماعت اسلامی نے کہا کہ شہبازشریف سے کہتا ہوں قصور،لاہورسےایک گھنٹہ دورہے شہبازشریف مصروفیات ترک کرکےکیوں نہیں آئے، انھوں نے سوال کیا کہ وزیراعلیٰ صاحب آپ کی ایلیٹ فورس کہاں گئی تھی؟، وزیراعلیٰ سے پوچھتا ہوں آپ کی ڈولفن فورس کہاں تھی۔

انکا مزید کہنا تھا کہ میرے ملک میں غریبوں کے خون کی کوئی قیمت نہیں ہے، سنا ہے کہ وزیراعلیٰ پنجاب رات کے اندھیرے میں قصور آئے ، زینب کے قاتل، فائرنگ کرنیوالے اہلکاروں کو بھی پھانسی دی جائے، پنجاب پولیس کو شرم آنی چاہئے۔

سراج الحق نے کہا کہ یزیدوں جواب دو ،قصور کوکربلا کیوں بنایا ہے، اب کارواں امام حسین کا ہوگا اوریزید کا گریبان ہوگا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top