site
stats
پاکستان

عدلیہ کی بالادستی تسلیم نہیں کی گئی، تو انارکی پھیلے گی: سینیٹر سراج الحق

لٹیروں سے دولت واپس لینےوالوں کوعوام سرآنکھوں پربٹھائیں گے

لاہور: امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ احتساب اداروں کے کام میں رکاوٹیں ڈالنا جمہوری رویہ نہیں.

امیر جماعت اسلامی نے یہ بات لاہورمیں پارٹی رہنماؤں سے گفتگو کرتی ہوئی کہی. ان کا کہنا تھا کہ عدلیہ کی بالادستی تسلیم نہ کی گئی، تو ملک میں انارکی پھیلے گی.

سراج الحق کا کہنا تھا کہ کرپٹ مافیا ملک کے مستقبل سے کھیل رہا ہے، قوم عدلیہ اور احتساب اداروں کے ساتھ کھڑی ہے.

انھوں‌ نے پارٹی رہنمائوں سے بات کرتے ہوئے کہا کہ لٹیروں سے دولت واپس لینے والوں کوعوام سرآنکھوں پر بٹھائیں گے. اداروں کے کام میں رکاوٹیں ڈالنا جمہوری رویہ نہیں.

برہان وانی کشمیریوں کے ہی نہیں بلکہ پاکستانی قوم کے بھی ہیرو ہیں، سراج الحق

ان کا کہنا تھا کہ ایمنسٹی اسکیمیں چوری کی دولت کےتحفظ کے لئے بنائی جارہی ہیں، بڑے مگرمچھوں پرہاتھ ڈالنےسےعوام میں اطمینان پیدا ہوا ہے، اس سلسلے کو جاری رہنا چاہیے.

سینیٹر سراج الحق کا کہنا تھا کہ احتساب اداروں‌ کو آزادی سے کام کرنا چاہیے، عدلیہ کی بالادستی تسلیم کی جائے.

واضح رہے کہ اس وقت عدلیہ کے فیصلوں کو حکومتی حلقوں کی جانب سے شدید تنقید کا نشانہ بنایاجارہا ہے۔ تجزیہ کاروں کا خیال ہے کہ یہ تنقید تصادم کی شکل اختیار کرسکتی ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات  کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

loading...

Most Popular

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top